'اپیل کا حق دہشتگرد کو بھی ملتا ہے مگر وزیراعظم پاکستان کو نہیں ملا'

'اپیل کا حق دہشتگرد کو بھی ملتا ہے مگر وزیراعظم پاکستان کو نہیں ملا'

لاہور: پاناما کیس میں نظر ثانی اپیلوں پر سپریم کورٹ کے فیصلے پر رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے مسلم لیگ ن کے رہنما طلال چوہدری نے کہا کہ ہماری نظرثانی کی اپیل پر نظر ثانی ہوئی ہی نہیں ہے۔ ہمارا کیس تھا کہ ہمیں ٹرائل کے بعد کوئی سزا دی جائے اور اپیل کا حق ہونا چاہیے کیونکہ دہشت گردوں کو بھی اپیل کا حق ملتا ہے لیکن وزیراعظم پاکستان  کو نہیں ملا اور اس کے بغیر ہی نااہلی ہو گئی۔


طلال چوہدری نے کہا کہ ہماری بنیادی اپیل یہ تھی کہ اس کیس میں بہت ساری چیزیں پہلی بار ہوئیں لیکن فری ٹرائل اور اپیل کے حق پر نظر نہیں ہوئی۔ ان کا کہنا تھا کہ ہم نے نظام عدل کے سامنے پیش ہو کر اس کی خامیوں کو نمایاں کیا اور ہم اسی لیے گرینڈ ڈائیلاگ کی بات کر رہے ہیں کیونکہ ایک وزیراعظم کو انصاف نہیں ملا تو عام آدمی کو کیسے ملے گا۔

انہوں نے مزید کہا یہ وہ تمام چیزیں ہیں جو ہم نے عوام کے سامنے رکھیں اور ہم اب عوام کا فیصلہ چاہتے ہیں۔ طلال چوہدری کا کہنا تھا کہ قانونی اور سیاسی مشاورت کے بعد عدالتی فیصلے پر اپنا فیصلہ کریں گے۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں