کانگو میں 77 لاکھ افراد فاقہ کشی کے شکار

کانگو میں 77 لاکھ افراد فاقہ کشی کے شکار

برسلز : اقوام ِ متحدہ نے خبردار کرتے ہوئے کہا ہے کہ جمہوریہ کانگو میں 77 لاکھ افراد فاقہ کشی کے شکار ہیں اگر ہنگامی امداد فراہم نہ کی گئی تو صورتحال مزید ابتر ہو جائیگی ۔اقوام متحدہ کی جانب سے جاری کردہ رپورٹ مین بتایا گیا ہے کہ جمہوریہ کانگو میں فاقہ کشی کے شکار انسانوں کی تعداد گزشتہ ایک سال کے اندر 18 لاکھ کے اضافے کے ساتھ 77 لاکھ تک ہو گئی ہے۔


اگر ہنگامی امداد فراہم نہ کی گئی تو صورتحال مزید ابتر ہو جائیگی ۔اقوام متحدہ کے عالمی خوراک پروگرام اور خوراک و زراعت تنظیم کی جانب سے جاری کردہ مشترکہ اعلامیہ میں واضح کیا گیا ہے کہ اس ملک میں جھڑپوں اور نقل مکانی کے باعث خوردنی اشیاء کا فقدان سنگین صورتحال اختیار کرتا جا رہا ہے۔

اعلامیہ کے مطابق جھڑپوں والے علاقوں کے کھیتوں میں گزشتہ دو سیزنز سے لوٹ مار کیے جانے کے باعث کسان زرعی اجناس حاصل کرنے سے قاصر ہیں اور خوراک کی مانگ ایک نازک سطح تک جا پہنچی ہے، ناقص غذا سے خسرے اور ہیضے جیسے متعدی امراض کے زور پکڑنے کے خطرات بھی موجود ہیں۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں