عمران علی شاہ پر سوتیلی والدہ کے سنگین الزامات

08:59 AM, 16 Aug, 2018

کراچی: سابق صوبائی وزیر کھیل ڈاکٹر محمد علی شاہ کی اہلیہ نے اپنے سوتیلے بیٹے اور تحریک انصاف کے نو منتخب رکن اسمبلی عمران علی شاہ پر سنگین نوعیت کے الزامات عائد کر دیے ہیں۔

 

تحریک انصاف کے رکن سندھ اسمبلی ایک کے بعد ایک مشکل میں پھنستے جا رہے ہیں پہلے کراچی میں شہری کو تشدد کا نشانہ بنائے جانے پر انہیں تنقید کا سامنا کرنا پڑا تھا اور اب سوتیلی والدہ نے بھی ان پر سنگین نوعیت کے الزامات لگا کر ان کی مشکلات بڑھا دی ہیں۔

 

عمران علی شاہ کی سوتیلی والدہ ڈاکٹر ریحانہ شاہ نے سوشل میڈیا پر اپنے ویڈیو پیغام میں بتایا کہ مرحوم ڈاکٹر محمد علی شاہ کے ساتھ ان کی شادی 1989 میں ہوئی تھی جس سے ان کا ایک بیٹا مصطفیٰ علی شاہ ہے۔

 

مزید پڑھیں: شازیہ مری کا خواتین کیلئے کھڑے نہ ہونے پر اسپیکر قومی اسمبلی سے شکوہ

ڈاکٹر ریحانہ نے الزام عائد کیا کہ ہماری شادی کے بعد سب سے بڑا مسئلہ یہی رہا کہ ڈاکٹر محمد علی شاہ کی پہلی بیوی سے ہونے والے بچوں عمران علی شاہ اور جنید علی شاہ نے ہماری شادی کو کبھی قبول ہی نہیں کیا۔

 

 

انہوں نے الزام عائد کیا کہ عمران علی شاہ اپنے گارڈز کے ساتھ اے او کلینک کے سرجن روم میں داخل ہوئے اور مجھے تشدد کا نشانہ بنایا۔

 

ڈاکٹر ریحانہ نے مزید کہا کہ عمران علی شاہ نے مجھے زدو کوب کرنے کے علاوہ نازیبا الفاظ بھی استعمال کیے اور مجھے دھمکی دی کہ اگر اے او کلینک نہیں چھوڑا تو ہم تمھیں اور تمھارے بچے کو نقصان پہنچائیں گے۔

 

ان کا کہنا ہے کہ عمران علی شاہ اور جنید علی شاہ کی دھمکیوں کی وجہ سے اپنے بیٹے کو امریکا منتقل کیا اور پھر جب ڈاکٹر محمد علی شاہ کا انتقال ہوا تو ہم امریکہ میں تھے لیکن ہمیں جنازے میں شرکت کی اجازت بھی نہیں دی گئی۔

 

انہوں نے کہا کہ جب امریکا سے پاکستان واپس آئی تو پتہ چلا کہ عمران علی شاہ اور جنید علی شاہ نے سندھ ہائی کورٹ سے جھوٹا وراثت نامہ بنوا لیا ہے جس میں انہوں نے کہا کہ صرف وہ دونوں ہی ڈاکٹر محمد علی شاہ کی جائیداد کے حقیقی وارث ہیں۔

 

ڈاکٹر ریحانہ نے کہا کہ عمران علی شاہ اور جنید علی شاہ نے ڈسٹرکٹ سینٹرل سے جھوٹا طلاق نامہ بھی بنوایا۔ ان لوگوں نے 1994 کا طلاق نامہ بنوایا جب کہ میرے بیٹے کی پیدائش 1996 کی ہے۔ میرے پاس مصطفیٰ علی شاہ کا پیدائشی سرٹیفکیٹ بھی موجود ہے جس پر ڈاکٹر محمد علی شاہ کا نام بھی درج ہے۔

 

یہ خبر بھی پڑھیں: امریکا کیساتھ تجارتی جنگ، چین دیگر ممالک سے سویا بین درآمد کرنے لگا

انہوں نے کہا کہ میں اپنا کیس عدالت میں لڑ رہی ہوں لیکن مجھے ان لوگوں سے اپنی جان کا خطرہ ہے۔ خاص طور پر ان کے ایم پی اے بننے کے بعد اپنے اور اپنے بیٹے کے لیے بہت ڈر گئی ہوں جبکہ بہت خوفزدہ ہوں کہ کسی بھی وقت کچھ بھی ہو سکتا ہے۔

 

ڈاکٹر ریحانہ نے چیئرمین تحریک انصاف عمران خان سے درخواست کی کہ اگر آپ واقعی تحریک انصاف کے چیئرمین ہیں تو ہمیں ہمارا جائز حق دلوائیں۔ میرے پاس تمام شواہد اور لیگل کاغذات موجود ہیں لیکن ہمیں ہمارے حق سے محروم کیا جا رہا ہے۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں

 

مزیدخبریں