پی آئی اے کی ائیر بس کو 3 کروڑ روپے میں فروخت کیے جانے کا انکشاف

اسلام آباد: پی آئی اے کی ائیر بس 310 اے بولی کے بغیر جرمن فرم کو3 کروڑ روپے میں فروخت کئے جانے کا انکشاف ہوا ہے۔ سینیٹ کی خصوصی کمیٹی معاملے کی تحقیقات کرے گی۔ چیئرمین سینیٹ نے کہا اگر پی آئی اے کے پاس اور جہاز کھڑے ہیں تو سینیٹ انہیں رعایتی نرخوں پر خریدنے کو تیار ہے۔

وفاقی وزیر پارلیمانی امور شیخ آفتاب نے ایوان کو بتایا پی آئی اے نے 1993 میں خریدے گئے 4 جہاز فروخت کرنے کا اشتہار دیا مگر کسی نے خریداری میں دلچسپی ظاہر نہیں کی۔ البتہ یہ جہاز جرمن فرم کو فروخت کر دیا گیا یا نہیں ابھی تک واضح نہیں۔ معاملے کی تحقیقات چل رہی ہیں اور رپورٹ 7 دن میں آ جائے گی جو سینیٹ میں پیش کروں گا۔

انہوں نے کہا اطلاع ہے کہ جرمن فرم یہ جہاز خرید کر جرمنی کے ایک میوزیم میں رکھنا چاہتی تھی۔ چیئرمین سینیٹ نے کہا یہ جہاز ہٹلر کا تھا کہ جرمنی کو اس میں اتنی دلچسپی تھی۔ سینیٹر مشاہد اللہ خان نے کہا اطلاعات ہیں کہ اس جہاز کی فروخت میں بڑی گڑ بڑ ہوئی ہے۔ سینیٹرز نے کہا ایسا ایک جہاز پی آئی اے سینیٹ کو بھی دے دے۔

چیئرمین سینیٹ نے کہا اگر پی آئی اے کا کوئی اور جہاز کھڑا ہے تو اسے سینیٹ خرید لیتی ہے۔ یقیناً خصوصی ڈسکاﺅنٹ بھی ملے گا۔ اس پر ایوان میں قہقہے گونج اٹھے۔ چیئرمین سینیٹ نے معاملہ سینیٹ کی خصوصی کمیٹی برائے پی آئی اے کے سپرد کر دیا۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں