بھارت نے پاکستانی سرحد کے قریب گولہ بارود جمع کر لیا، خرم دستگیر

بھارت نے پاکستانی سرحد کے قریب گولہ بارود جمع کر لیا، خرم دستگیر

 اسلام آباد: وزیر دفاع خرم دستگیر نے کہا ہے کہ بھارت کولڈ اسٹارٹ ڈاکٹرائن پر عمل کرنے کی مذموم کوشش کر رہا ہے اور مودی 


سرکار نے پاکستانی سرحد کے قریب چھاونیاں بنا کر بارود جمع کرنا شروع کردیا ہے، تاہم اگر بھارت کی جانب سے کسی بھی قسم کی جارحیت کی کوشش کی گئی تو منہ توڑ جواب دیا جائے گا۔

ایک انٹرویو میں وزیر دفاع کا  کہنا تھا  کہ بھارت نے سرحدوں اور کنٹرول لائن کے بہت قریب ہوائی اڈے اور چھاونیاں بنانا شروع کردی ہیں جبکہ گولہ بارود بھی جمع کیا جا رہا ہے، انہوں نے کہا   کہ بھارت نے مذاکرات کا موقع ضائع کردیا اور موجودہ صورتحال میں بھارت کو مذاکرات کی دعوت نہیں دی جاسکتی جبکہ اگر پاکستان کی جانب سے بھارت نے کسی بھی جارحانہ کارروائی کی کوشش کی تو  اس کو  کرارا  جواب ملے گا۔

جماعت الدعو کے سربراہ حافظ سعید کے حوالے سے بات کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ اگر اس معاملے میں قانون کے مطابق مقدمہ ہوگا تو اس پر ضرور عملدرآمد کیا جائے گا۔

خیال رہے کہ اس سے قبل وزیر دفاع خرم دستگیر نے سینیٹ میں بھی پالیسی بیان دیتے ہوئے بتایا تھا کہ بھارت کی موجودہ حکومت کی جانب سے غیر معمولی دشمن جیسا رویہ اور پاکستان مخالف اقدام نے امن کے لیے پیدا ہونے والے عمل کو مسلسل کم کردیا۔انہوں نے بتایا تھا کہ بھارتی حکومت کی جانب سے اس وقت امن کا موقع کھویا گیا، جب بھارت کے ساتھ تعلقات کو بہتر بنانے کے لیے پاکستان میں سیاسی اتفاق رائے موجود تھا۔

وزیر دفاع نے کہا تھا کہ بھارت کی جانب سے کولڈ اسٹارٹ ڈاکٹرائن، بھاری فوجی مشقیں اور امن عمل میں تبدیلی پاکستان کی جانب نئی دہلی کے جارحانہ رویے کا ثبوت ہے۔انہوں نے کہا تھا  کہ بھارت کی جانب سے لائن آف کنٹرول اور ورکنگ بانڈری پر فائرنگ اور گولہ باری میں اضافہ کیا  گیا اور  پاکستان مخالف اقدامات بھی بڑھ  رہے ہیں۔