ہندوستان کے پاس ثبوت ہیں تو پیش کرے اور پاکستان تعاون کرے گا، وزیر خارجہ

ہندوستان کے پاس ثبوت ہیں تو پیش کرے اور پاکستان تعاون کرے گا، وزیر خارجہ
بھارت کو سیاست سے بالاتر ہو کر سوچنا چاہیے، وزیر خارجہ۔۔۔۔۔فائل فوٹو

میونخ: وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے میونخ میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پلوامہ واقعہ افسوس ناک ہے اور پاکستان اس کی مذمت کرتا ہے جبکہ پاکستان کو سفارتی طور پر تنہا کرنے کا بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی کا خواب کبھی پورا نہیں ہو گا۔


ان کا مزید کہنا تھا کہ دنیا حقائق سے واقف ہے کہ پاکستان کو پلوامہ واقعے سے کوئی فائدہ نہیں ہو گا جبکہ پاکستان جانی نقصان اور تشدد کے کبھی حق میں نہیں ہے۔ پاکستان اپنی سرزمین کو دہشت گردی کیلئے استعمال نہیں ہونے دے گا اور یہ ہماری واضع پالیسی اور حکمت عملی ہے۔

وزیر خارجہ نے کہا کہ بغیر تحقیق کے الزام تراشیوں پر افسوس ہوا اگر ہندوستان کے پاس ثبوت ہیں تو پیش کرے اور پاکستان تعاون کرے گا۔ الزام تراشیوں نہ پہلے کچھ حاصل ہوا ہے نہ آج ہو گا اور ہمیں ان کے جانی نقصان پرصدمہ ہے ان خاندانوں کے ساتھ اظہار تعزیت کرتے ہیں۔ انہون نے کہا انتخابات آتے جاتے رہتے ہیں  اور بھارت کو سیاست سے بالاتر ہو کر سوچنا چاہیے جب کہ خطے کے امن و استحکام کو فوقیت دینی چاہیے۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ کانفرنس کے اختتام پر پہلے سے زیادہ پراعتماد لوٹ رہا ہوں اور امریکی سینیٹرزسے ملاقات میں واضع ہو گیا کہ وہ پاکستان کے ساتھ اینگیج کرنے کو تیار ہیں جب کہ جرمنی، کینیڈا، ازبک وزرائے خارجہ اور افغان صدر کے ساتھ ملاقاتوں سے پاکستان کوسفارتی طور پر تنہا کرنے کا بھارتی ایجنڈا خاک میں مل گیا ہے۔