بلاول بھٹو زرداری اور مراد علی شاہ کا نام ای سی ایل سے نکالاجائے، سپریم کورٹ کا تحریری فیصلہ

بلاول بھٹو زرداری اور مراد علی شاہ کا نام ای سی ایل سے نکالاجائے، سپریم کورٹ کا تحریری فیصلہ
فوٹو فائل

اسلام آباد: سپریم کورٹ نے جعلی بینک اکاؤنٹس کیس کا تحریری فیصلہ جاری کرتے ہوئے کہا کہ بلاول بھٹو اور وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کا نام ای سی ایل سے نکالا جائے ۔


جسٹس اعجاز الاحسن کے تحریری حکم نامے میں کہا گیا ہے کہ تحقیقات میں جرم بنتا ہوا تو احتساب عدالت میں ریفرنس فائل کئے جائیں۔چیئرمین نیب مستند ڈی جی کو ریفرنس تیاری اور دائر کرنے کی ذمہ داری دیں۔ آئی ٹی رپورٹ اور دستیاب شواہد فوری طور پر نیب کو بھیجے جائیں ۔نیب مراد علی شاہ ، بلاول اور دیگر کے خلاف تحقیقات جاری رکھے  تاہم ان کے نام ای سی ایل سے نکال دیے جائیں ۔دونوں کے خلاف شواہد آئیں تو نام ای سی ایل میں ڈالنے کے لیے وفاقی حکومت سے رجوع میں کوئی رکاوٹ نہیں ہوگی۔

فیصلے میں کہا گیا ہے کہ مراد علی شاہ کا نام ای سی ایل میں رکھنے سے اُن کے کام میں مسائل پیدا ہونگے ۔مراد علی شاہ کا نام ای سی ایل میں رکھنے سے اُن کی نقل و حرکت میں رکاوٹ پیدا ہوگی۔جے آئی ٹی رپورٹ کے مطابق یہ معاملہ کرپشن اور منی لاڈرنگ کا ہے۔بادی النظر میں نیب کو بجوانے سے متعلقہ ہے۔

سپریم کورٹ نے کہا کہ جے آئی ٹی کے مطابق معاملے میں کمیشن، سرکاری خزانے میں بے ضابطگیاں، اختیارات کے ناجائز استعمال کا ہے۔فیصلے مین یہ بھی کہا گی اکہ فریقین کے وکلا عدالت کو متاثر کُن دلائل نہیں دے سکے۔چند وکلا نے تسلیم کیا کہ معاملہ نیب کے دائرہ اختیار میں آتا ہے۔