ٹرانسپرنسی انٹرنیشنل نے پی ایس ایل کے نشریاتی حقوق کی فروخت میں مبینہ بے ضابطگیوں کی نشاندہی کر دی 

ٹرانسپرنسی انٹرنیشنل نے پی ایس ایل کے نشریاتی حقوق کی فروخت میں مبینہ بے ضابطگیوں کی نشاندہی کر دی 
سورس: فوٹو: بشکریہ ٹوئٹر

لاہور: ٹرانسپرنسی انٹرنیشنل نے پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) کے نشریاتی حقوق کی فروخت میں مبینہ بے ضابطگیوں کی نشاندہی کرتے ہوئے کہا نجی ٹی وی اور سرکاری ٹی وی کے معاملے پر کوئی تاریخ درج نہیں ہے۔ 

تفصیلات کے مطابق ٹرانسپرنسی انٹرنیشنل نے پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کو پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) کے نشریاتی حقوق سے متعلقہ معاملے پر خط لکھا ہے جس میں پی ایس ایل 7 اور 8 کے نشریاتی حقوق کی فروخت میں مبینہ بے ضابطگیوں کی نشاندہی کی گئی ہے۔ 

ٹرانسپرنسی انٹرنیشنل نے اپنے خط کے ذریعے نجی ٹی وی چینل کی جانب سے مقدمے کیلئے جمع دستاویزات میں بے ضابطگیوں کی نشاندہی کرتے ہوئے کہا ہے کہ نشرتی حقوق خریدنے کیلئے ایک کروڑ روپے کی سیکیورٹی ٹیکنیکل بڈ کے ساتھ نہیں جمع کروائی گئی۔

خط میں مزید کہا گیا ہے کہ پی ایس ایل نشریاتی حقوق سے متعلق نجی ٹی وی اور سرکاری ٹی وی کے درمیان ہونے والے کنسورشم معاہدے پر کوئی تاریخ بھی درج نہیں ہے جبکہ پی سی بی نے پیپرا قوانین کے مطابق ایولیوشن رپورٹ اب تک پیپرا ویب سائٹ پر اپ لوڈ نہیں کروائی ہے۔