سٹیٹ بینک نےشرح سود میں 1 فیصد اضافہ کردیا

سٹیٹ بینک نےشرح سود میں 1 فیصد اضافہ کردیا
Image Source: Sbp Fb File Photo

کراچی :سٹیٹ بینک آف پاکستان نے  آئندہ دو ماہ کے لئے مانیٹری پالیسی کا اعلان کرتے ہوئے شرح سود میں 1 فیصد اضافہ کردیا جس کے بعد شرح سود  13.25 فیصد ہوگئی۔


 

 تفصیلات کے مطابق،گورنر سٹیٹ بینک ڈاکٹر رضا باقرآئندہ دو ماہ کے لئے مانیٹری پالیسی کا اعلان کرت ہوئے شرح سود میں 1 فیصد اضافہ کردیا جس کے بعد شرح سود  13.25 فیصد ہوگئی۔

 ذرائع نے بتایا کہ سٹیٹ بینک نے ملک کے موجودہ معاشی حالات کو دیکھتے ہوئے ہوئے شرح سود میں اضافہ کیا۔ گورنر اسٹیٹ بینک نے کہا کہ آئندہ مالی سال میں مہنگائی کافی حد تک نیچے آ جائے گی،مہنگائی کی وجہ سےشرح سودمیں اضافےکافیصلہ کیاگیا۔

انہوں نے کہا کہ شرح سود میں اضافےکا  فیصلہ گیس اوربجلی کی قیمتوں میں اضافےکو مدنظررکھاگیا،اضافے کی وجہ بجٹ میں ٹیکس کے اقدامات ہیں،طلب میں کمی کا رحجان دیکھا جا رہا ہے۔ شرح سود پالیسی آئندہ دو ماہ کے لیے ہے،رواں مالی سال اوسط مہنگائی 11سے12فیصد رہنےکاتخمینہ ہے۔

 

یادرہے کہ حالیہ اضافے سے قبل  بنیادی شرح سود 12.25 فیصد  تھی  اور مئی 2018 سے اب تک شرح سود میں 5.75 فیصد کا اضافہ ہوچکا ہے، دوسری جانب جون 2019 میں مہنگائی کی شرح 8.9 فیصد رہی ہے۔