فارن فنڈنگ کیس کا فیصلہ 30 دن میں کرنے کا حکم کالعدم قرار

فارن فنڈنگ کیس کا فیصلہ 30 دن میں کرنے کا حکم کالعدم قرار

اسلام آباد: اسلام آباد ہائیکورٹ نے پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) فارن فنڈنگ کیس کا فیصلہ 30دن میں کرنے کا حکم کالعدم قرار دیدیا ہے۔ 

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائیکورٹ نے پی ٹی آئی کی انٹرا کورٹ اپیل جزوی طور پر منظور کرتے ہوئے تمام سیاسی جماعتوں کی ممنوعہ فنڈنگ کی تحقیقات ایک ساتھ کرنے کی پی ٹی آئی کی درخواست نمٹا دی ہے اور ممنوعہ فنڈنگ کیس کا فیصلہ ایک ماہ میں کرنے کا سنگل بینچ کا فیصلہ کالعدم قرار دیدیا ہے۔ 

اسلام آباد ہائیکورٹ کے فیصلے میں کہا گیا ہے کہ عدالت امید کرتی ہے الیکشن کمیشن آف پاکستان (ای سی پی) باقی جماعتوں کیخلاف کارروائی بھی مناسب وقت میں مکمل کرے گا اور کارروائی شفاف انداز میں آگے بڑھائی جائے گی۔ 

عدالتی فیصلے میں کہا گیا کہ الیکشن کمیشن نے ابھی تک کوئی آرڈر پاس نہیں کیا جبکہ الیکشن کمیشن کے نمائندے نے یقین دہانی کرائی کہ سب سیاسی جماعتوں کیخلاف بلاتفریق کارروائی آگے بڑھائی جائے گی۔ 

اسلام آباد ہائیکورٹ نے اپنے فیصلے میں کہا ہے کہ الیکشن کمیشن پر شک کی گنجائش نہیں کہ تمام جماعتوں سے ایک سا برتاؤ کیا جائے گا اور توقع ہے الیکشن کمیشن تمام جماعتوں کے کیسز مناسب وقت میں نمٹائے گا۔

مصنف کے بارے میں