چین نے دوہری صلاحیت رکھنے والا جہاز تیار کر لیا

چین نے دوہری صلاحیت رکھنے والا جہاز تیار کر لیا

بیجنگ: چین کا دوہرے نظام کا حامل پہلا جہاز اے جی 600 کی پہلی ششماہی میں فضا میں کارروائی کیلئے تیار ہو گا جبکہ سال کی دوسری ششماہی میں وہ پانی کے اندر بھی اپنی کارروائی کے لئے استعمال کیا جا سکے گا۔


اے جی 600جہاز بوئنگ 737کے سائز جیسا ہے اور یہ دنیا کا دوہری کارکردگی والا سب سے بڑا جہاز ہو گا۔ یہ جہاز سرکاری کمپنی ایوی ایشن انڈسٹری کارپوریشن آف چائنا تیار کیا ہے ، جہاز کی لمبائی 37میٹر ہے جبکہ اس کے پروں کا پھیلائو 38.8میٹر ہے جبکہ وزن 53.5ٹن ہے، یہ جہاز مختلف آفات میں کارروائی کر سکتا ہے۔

جنگلوں میں لگی آگ کو بجھانے اور سمندروں میں آفات سے نمٹنے کے لئے کامیابی سے استعمال ہو سکتا ہے۔ اب تک جہاز کے 17آرڈرز مل چکے ہیں۔ پہلا جہاز گزشتہ سال جولائی میں چین کے جنوبی شہر زو ہائی میں مکمل کیا گیا تھا اور اسے پہلی بار چین کے ایئر شو 2016 میں عوام کیلئے پیش کیا گیا۔

جہاز کے چیف ڈیزائنر وانگ لنگ کائی نے کہا ہے کہ اے 600جہاز ایک بحری جہاز کی طرح ہے تا ہم یہ پرواز کر سکتا ہے ، یہ فضا او ر زیر آب بھی استعمال ہو سکتا ہے۔ اس میں چینی ساختہ چار انجن لگائے گئے ہیں اور یہ بحری جہاز کی باڈی کی طرح تیار کیا گیا ہے۔ یہ بیس سیکنڈ میں12 ٹن پانی جمع کر سکتا ہے اور 370ٹن پانی کسی بھی ٹینک میں منتقل کر سکتا ہے۔

اس جہاز میں ایک وسیع علاقے میں تحقیق کرنے کی صلاحیت موجود ہے ، یہ سمندری وسائل کا پتہ چلانے کے لئے بہت مفید جہاز ہے۔ یہ سمندری ماحول کی مانیٹرنگ وسائل کا کھوج لگانے اور انہیں منتقل کرنے کی بھی پوری صلاحیت رکھتا ہے۔

نیوویب ڈیسک< News Source