25 روپے کے عوض معصوم بچے کا قتل ، پولیس نے ملزم گرفتار کر لیا

25 روپے کے عوض معصوم بچے کا قتل ، پولیس نے ملزم گرفتار کر لیا

کراچی: کریم آباد کے علاقے میں اپرٹمنٹ کے مالک نے 25 روپے کے عوض ایک افغان لڑکے کو قتل کر دیا ۔ تفصیلات کے مطابق  کراچی کے علاقے کریم آباد میں اپارٹمنٹ کے مالک نے زینہ صاف کرنے کی 25 روپے اجرت مانگنے والے نور آغا کو مبینہ طور پر فائرنگ کرکے قتل کردیا تھا۔یہ ملزم کراچی سے بیروں، ملک روانہ ہونے کی کوشش کی مصروف میں تھا کہ پولیس نے بروقت کارروائی کرتے ہوئے اس شخص کو کراچی ایئر پورٹ سے گرفتار کر لیا ہے ۔افغان بچے کو اتوار کے دن قتل کیا گیا تھا ۔


سپرنٹنڈنٹ پولیس (ایس پی) گلبرگ بشیر بروہی نے میڈیا  کو بتایا کہ مشتبہ شخص کو اس وقت گرفتار کیا گیا جب وہ مبینہ طور پر امریکا فرار ہونے کی کوشش کر رہا تھا

انہوں نے کہا کہ گرفتار شخص سے بڑی تعداد میں پاکستانی اور غیر ملکی کرنسی بھی برآمد ہوئی۔

پولیسکا کہنا تھا کہ افغان لڑکا نور آغا خاکروب تھا جو اپنے بھائی عمر اور دیگر کے ساتھ مل کر کریم آباد کی رہائشی کالونیوں سے چند روپوں کے عوض کوڑا کرکٹ جمع کرنے کا کام کرتا تھا اور یہ تمام لڑکے سہراب گوٹھ کے قریب مچھر کالونی کے رہائشی تھے۔تاہم ایاز نے نور آغا کو اجرت ادا کرنے کے بجائے طیش میں آکر مبینہ طور پر فائرنگ کرکے اسے قتل کردیا اور موقع سے فرار ہوگیا۔پولیس کو اس شخص کی اسی دن سے تلاش تھی اور آج پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے اس ظالم شخص کو گرفتار کر لیا ہے۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں