ایشیا کپ: پہلے میچ میں بنگلہ دیش کی سری لنکا کو شکست

ایشیا کپ: پہلے میچ میں بنگلہ دیش کی سری لنکا کو شکست

image by facebook

دبئی :ایشیا کپ کے افتتاحی میچ میں بنگلہ دیش نے مشفیق الرحیم کی 144 رنز کی شاندار اننگز اور باؤلر کی بہترین کارکردگی کی بدولت سری لنکا کو باآسانی 137 رنز سے شکست دے کر قیمتی 2 پوائنٹس حاصل کرلیا۔

دبئی میں کھیلے گئے ایشیا کپ کے پہلے میچ میں بنگلہ دیش نے ٹاس جیت پہلے خود بیٹنگ کا فیصلہ کیا توسری لنکا کے تجربہ کار باؤلر لاستھ ملنگا نے لٹن داس اور شکیب الحسن کو پویلین رخصت کرکے تباہ کن آغاز کر دیا۔

ابھی ٹیم اس نقصان سے سنبھلی بھی نہ تھی کہ اگلے ہی اوور میں تمیم اقبال انجری کا شکار ہو ریٹائرڈ ہرٹ ہو گئے اور ایک طرح سے بنگلہ دیشی ٹیم 3 وکٹوں سے محروم ہو گئی۔

اس موقع پر تجربہ کار مشفیق الرحیم کا ساتھ دینے محمد متھن آئے اور دونوں کھلاڑیوں نے سری لنکن فیلڈرز کی ناقص کارکردگی کی بدولت 131 رنز کی عمدہ شراکت قائم کی۔

بنگلہ دیشی اننگز کے 10اوورز مکمل ہونے تک سری لنکن ٹیم 4 کیچ ڈراپ کر چکی تھی، متھن اور مشفیق نے اس کا بھرپور فائدہ اٹھاتے ہوئے سری لنکن ٹیم کو سبق سکھانے کا فیصلہ کیا۔

دونوں کھلاڑیوں نے عمدہ شراکت قائم کر کے ابتدائی نقصان کا کسی حد تک ازالہ کردیا لیکن اس سے قبل کہ میچ سری لنکا کے ہاتھ سے نکلتا، کپتان اینجلو میتھیوز ایک مرتبہ پھر اپنے سب سے تجربہ کار باؤلر ملنگا کو باؤلنگ پر واپس لائے اور انہوں نے کپتان کے اعتماد پر پورا اترتے ہوئے 63رنز بنانے والے متھن کی اننگز کا خاتمہ کردیا۔

اس موقع پر بنگلہ دیش کو یکے بعد دیگرے مزید 2 وکٹوں کا نقصان اٹھانا پڑا اور محمود اللہ کے بعد مصدق حسین بھی ایک رن بنا کر آؤٹ ہو گئے ، دوسرے اینڈ پر موجود مشفیق الرحیم نے عمدہ بیٹنگ جاری رکھی اور سری لنکا نے 86کے انفرادی اسکور پر ان کا کیچ ڈراپ کر کے حریف ٹیم کے بڑے اسکور کی راہ ہموار کی۔

بنگلہ دیش کی ٹیم ایک اینڈ سے وکٹیں گنواتی رہی لیکن دوسرے اینڈ سے مشفیق نے جارحانہ بیٹنگ کرتے ہوئے اپنی سنچری مکمل کی اور ٹیم کو بڑے اسکور تک پہنچانے کی جدوجہد جاری رکھی۔

انہوں نے نویں وکٹ کے لیے مستفیض الرحمٰن کے ساتھ 26رنز کی شراکت کی لیکن 229 کے مجموعی اسکور پر فاسٹ باؤلر آؤٹ ہوئے تو ایسا لگا کہ بنگلہ دیش کی اننگز کا اختتام ہو گیا کیونکہ تمیم اقبال پہلے ہی انجری کا شکار ہو کر میدان سے باہر جا چکے تھے۔

لیکن سٹیڈیم میں موجود تماشائیوں کی اس وقت حیرت کی انتہا نہ رہی جب انہوں نے کلائی میں فریکچر کے شکار تمیم کو بلا سنبھالے میدان میں آتے

ہوئے دیکھا جنہوں نے ایک ہاتھ سے بیٹنگ کی۔

تمیم کو میدان میں آ کر صرف ایک ہی گیند کا سامنا کرنے کا موقع ملا کیونکہ دوسرے اینڈ پر موجود مشفیق نے اس کے بعد اسٹرائیک اپنے پاس رکھتے ہوئے 10ویں وکٹ کے لیے مزید 32رنز جوڑ کر اسکور 261 تک پہنچا دیا۔