اندھیرے میں اسمارٹ فون استعمال کرنے والے اندھے پن کا شکار

اندھیرے میں اسمارٹ فون استعمال کرنے والے اندھے پن کا شکار

لاہور: آج کے جدید دور میں صرف نوجوان ہی نہیں بلکہ بڑے بوڑھے بھی اسمارٹ فون کے عادی ہو چکے ہیں. رات کو بتی بجھانے کے بعد لحاف میں گھس کربہت سارے لوگ سمارٹ فون کا استعمال  کرتے ہیں. لیکن کیا آپ کو معلوم ہے کہ یہ آپ کے لئے مہلک ثابت ہو سکتا ہے. جی ہاں، ایک تحقیق کے مطابق اندھیرے میں اسمارٹ فون استعمال کرنے سے لوگ اندھےپن کا شکار بن سکتے ہیں.


نیو انگلینڈ جرنل آف میڈیسن میں شائع ایک رپورٹ کے مطابق، دو خواتین میں 'ٹراجٹی اسمارٹ فون بلاڈن' پایا گیا. اس میں وہ اندھیرے میں مسلسلسمارٹ فون کا استعمال کر 15 منٹ کے لئے ایک آنکھ سے نابینا ہو جاتیں تھی.

ان میں سے ایک عورت نے بتایا کہ اندھیرے میں زیادہ سمارٹ فونز کا استعمال کرنے سے کافی مہینوں تک انہیں اس بیماری کو جھیلنا پڑا تھا. وہ بائیں طرف لیٹی اور فون کی ساری روشنی دائیں آنکھ پر پڑتی تھی. اس کا اثر ان کی دائیں آنکھ پر پڑا.

وہیں دوسری خاتون کا کہنا ہے کہ وہ صبح سورج نکلنے سے پہلے ہی اٹھ جاتی تھیں اور فون پر خبریں پڑتی تھیں. قریب چھ ماہ بعد انہیں محسوس ہوا کہ وہ بھی اس کا شکار بن چکی ہیں.

ان خواتین نے اس بیماری کے لئے MRI، دل ٹیسٹ تک کروائیں لیکن کچھ معلوم نہیں پڑا. اس کے بعد آنکھوں کے ڈاکٹر کے پاس گئیں تو انہیں اس کی وجہ سمجھ آیا.

نیوویب ڈیسک< News Source