ای سی ایل کے معاملے پر چوہدری نثار، احسن اقبال میں ٹھن گئی

 اسلام آباد: ای سی ایل کے معاملے پر چوہدری نثار اور موجودہ وفاقی وزیر داخلہ احسن اقبال میں ٹھن گئی۔

احسن اقبال نے چوہدری نثار کے جواب پر ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ ان کے دور میں فیصلے کہیں اور ہوتے ہوں گے۔ ہم نے ای سی ایل کی پالیسی کو اوپن کر دیا ہے، اب وزارت داخلہ کے فیصلے آئین اور قانون کے مطابق ہوتے ہیں کہیں اور نہیں۔

انہوں نے کہا نوید قمر کو بتانا چاہتا ہوں کہ اگر حکومت ای سی ایل کے معاملے میں اپنا اختیار استعمال کرنا چاہتی تو ڈاکٹر عاصم کو باہر جانے کی اجازت نہ ملتی۔ راجہ پرویز اشرف کیلئے رکاوٹ پیدا کرسکتے تھے لیکن ہم نے اس کو شفاف انداز میں چلایا۔

ای سی ایل پر نام ڈالنا یا نکالنا وفاقی حکومت کا اختیار ہے۔ ہم نے 600 سے زائد کیسوں کو کابینہ کی منظوری کیلئے بھیجا ہے، اس میں میاں نواز شریف اور اسحاق ڈار کے کیس بھی شامل ہیں، یہ کیس گزشتہ روز بھیجے گئے ہیں، ہم نے اس بارے میں لا ڈویژن سے ایڈوائس لی ہے، اب کابینہ ہی اس بات کی مجاز ہے کہ کسی کا نام ای سی ایل میں ڈالے یا اس سے نکال دے۔

 

 مزید پڑھیں: نواز شریف کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کے حوالے سے نوید قمر، چوہدری نثار میں تکرار