جراثیم کش سپرے انسانوں کیلئے خطرناک ہو سکتا ہے، عالمی ادارہ صحت

جراثیم کش سپرے انسانوں کیلئے خطرناک ہو سکتا ہے، عالمی ادارہ صحت

جنیوا :عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) نے خبردار کیا ہے کہ کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکھنے کے لیے گلیوں میں جراثیم کش اسپرے انسانوں کے لیے خطرناک ثابت ہو سکتا ہے۔


جینیوا میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے عالمی ادارہ صحت کے سربراہ ڈاکٹر ٹیڈروس ادھانوم نے کہا کہ گلیوں میں جراثیم کش اسپرے کرنے سے کورونا وائرس کا خاتمہ نہیں ہوتا بلکہ یہ لوگوں کے لیے مزید خطرناک ثابت ہو سکتا ہے۔ عالمی ادارہ صحت کے سربراہ نے بتایا کہ گلیوں یا بازاروں میں جراثیم کش اسپرے کورونا کے خا تمے میں موثر ثابت نہیں ہوتا کیونکہ وہ گرد اور مٹی کی وجہ سے غیر مو ثر ہو جاتا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ جراثیم کش اسپرے کسی کے لیے بھی جسمانی اور نفسیاتی طور پر نقصان دہ ثابت ہو سکتا ہے کیونکہ انسانوں پر کلورین یا دیگرکیمیکل کے چھڑکاؤ سے آنکھ یا جلد متاثر ہو سکتی ہے۔

ڈاکٹر ٹیڈروس ادھانوم کے مطابق کسی بھی حال میں انسانوں پر جراثم کش دوا کا اسپرے نہیں کرنا چاہیے، البتہ بند جگہوں پر جراثیم کش دوا کسی کپڑے پر لگا کر استعمال کی جانی چاہیے۔