سعودی عرب  پاکستانی  کاروباری افراد کو  تین سال کا ملٹی پل ویزہ دینے پر غور  کر رہا ہے، نواف سعید احمد

لاہور: سعودی عرب کے سفیر نواف سعید احمد نے کہا ہے کہ پاکستان اور سعودی عرب برادر ممالک ہیں، دونوں ممالک کے مابین تجارت مزید بڑھانے کی ضرورت ہے، عمرہ زائرین کی بائیومیٹرک کے عمل میں بہتری لائی جائے گی اور 4 دسمبر سے بائیس بائیومیٹرک سہولیات سنٹر فعال ہو جائیں گے،دوبارہ عمرہ کرنے والے زائرین کی فیس میں کمی کی کوشش کروں گا۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز لاہور چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری میں خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ سعودی سفیر نواف سعید احمد نے کہاکہ پاکستان مسلمان برادر ملک ہے جسے انتہائی قدر کی نظر سے دیکھتے ہیں،پاکستان کی ترقی و خوشحالی کے لئے سوچتے اور تعاون کرتے ہیں، پاکستانی سرمایہ کاروں کو ہرممکن سہولیات دینے کے لئے تیار ہیں،سعودی عرب ہر مشکل وقت میں پاکستان کے ساتھ کھڑا ہے اور اکٹھے ترقی کریں گے ۔

انہوں نے کہا کہ پاکستانی چاول دنیا کا بہترین چاول ہے۔ دونوں ممالک کے مابین تجارت مزید بڑھانے کی ضرورت ہے۔انہوں نے کہا کہ عمرہ زائرین کی بائیومیٹرک کے عمل میں بہتری لائی جائے گی اور 4 دسمبر سے بائیس بائیومیٹرک سہولیات سنٹر فعال ہو جائیں گے، دوبارہ عمرہ کرنے والے زائرین کی فیس میں کمی کی کوشش کروں گا۔اعتماد سنٹر سے 45سے زائد عمر کے عمرہ زائرین کو فنگر پرنٹس سے مستثنیٰ کرنے کی بھی کوشش کر رہے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان اور سعودی عرب ٹیم کی صورت میں کام کرنے پر یقین رکھتا ہے اورہم کاروباری افراد کو تین سال کا ملٹی پل ویز دینے پر غور کر رہے ہیں۔

مصنف کے بارے میں