سٹیل ملز ملازمین کی اگلے گریڈ میں ترقی سے متعلق درخواستیں مسترد

سٹیل ملز ملازمین کی اگلے گریڈ میں ترقی سے متعلق درخواستیں مسترد
سورس: فوٹو: بشکریہ ٹوئٹر

کراچی: سپریم کورٹ آف پاکستان نے سٹیل ملز ملازمین کی اگلے گریڈ میں ترقی سے متعلق درخواستیں مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ کئی سالوں سے سٹیل ملز کی پیداوار ہی بند ہے تو پھر کس بات پر ترقی دی جائے۔ 

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ کراچی رجسٹری میں پاکستان سٹیل ملز کے ملازمین کی اگلے گریڈ میں ترقی سے متعلق سماعت ہوئی اور عدالت نے انجینئر سمیع میمن و دیگر کی ترقیوں سے متعلق درخواستیں مسترد کر دیں۔ 

 چیف جسٹس آف پاکستان نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ آپ کو کیوں ترقی دی جائے آپ لوگ تو کام ہی نہیں کررہے ، آپ کو کس بات کی تکلیف ہے، بیٹھے بیٹھے تنخواہ لے رہے ہیں ، 2015 سے جب سٹیل ملز کی پیداوار ہی بند تو آپ کو کس بات کا پروموشن دیں۔

درخواست گزاروں کا کہنا تھا کہ سٹیل ملز کی پیداوار بند ہے مگر باقی تمام سیکشن چل رہے ہیں، 2011 سے پروموشن نہیں ہوئے، کورٹ میں کیس کے باوجود سٹیل ملز نے ملازمت سے ہی نکال دیا ہے۔