اداکارہ نہیں ڈاکٹر بننا چاہتی تھی پونم ڈھون

اداکارہ نہیں ڈاکٹر بننا چاہتی تھی پونم ڈھون

اداکارہ نہیں ڈاکٹر بننا چاہتی تھی پونم ڈھون

ممبئی: بالی ووڈ میں پونم ڈھلوں نے اپنی دلکش اداوں سے تقریبا تین دہائی تک ناظرین کو جادو کیا لیکن کم لوگوں کومعلوم ہے کہ وہ ڈاکٹر بننا چاہتی تھیں۔پونم کی پیدائش 18 اپریل 1962 کو کانپور میں ہوئی۔ان کے والد امریک سنگھ ہندوستانی فضائیہ میں انجینئر تھے۔انہوں نے اپنی ابتدائی تعلیم چنڈی گڑھ کارمیل کانوینٹ ہائی اسکول میں حاصل کی۔


سال 1977 میں پونم کو آل انڈیا مقابلہ حسن میں حصہ لینے کا موقع ملا جس میں وہ پہلے نمبر پرآئیں۔اس دوران پونم کے حسن سے متاثر ہوکر ہدایت کار یش چوپڑا نے اپنی فلم 'ترشول' میں ان سے کام کرنے کی پیشکش کی لیکن پہلے تو انہوں نے اس پیشکش کو مسترد کر دیا لیکن بعد میں پنجاب یونیورسٹی میں ملازم ان کے خاندانی دوست گارگي نے انہیں سمجھایا کہ فلموں میں کام کرنا کوئی بری بات نہیں ہے۔

اس کے بعد پونم کے اہل خانہ نے انہیں اس شرط پر فلموں میں کام کرنے کی اجازت دی کہ وہ اسکول کی چھٹیوں کے دوران ہی فلموں میں اداکاری کریں گی۔'ترشول' میں پونم ڈھلوں کو سنجیو کمار، ششی کپور اور امیتابھ بچن جیسے نامور ستاروں کے ساتھ کام کرنے کا موقع ملا۔اس فلم میں انہوں نے سنجیو کمار کی بیٹی کا کردار ادا کیا جو اداکار سچن سے محبت کرتی ہے۔فلم میں ان پر فلمایا گیت 'گپپوجی گپپوجی گم گم' ان دنوں نوجوانوں کے زبان پر زدعام تھے.

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں