ایل او سی کی خلاف ورزی،بھارتی ہائی کمشنر کی دفتر خارجہ طلبی

واں سال بھارتی فورسز نے سیز فائر کی ایک ہزار 50 سے زائد بار خلاف ورزیاں کیں۔۔۔فائل فوٹو

اسلام آباد:سیالکوٹ سیکٹر پر ایل او سی کی خلاف ورزی اور بلا اشتعال فائرنگ سے ایک ہی خاندان کے چار افراد کی شہادت کے بعد بھارتی ہائی کمشنر کو دفتر خارجہ طلب کیا گیا اور پاکستان کی جانب سے شدید احتجاج بھی کیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق ترجمان دفترخارجہ کی جانب سے جاری کردہ بیان کے مطابق بھارتی ہائی کمشنر اجے بساریہ کو دفتر خارجہ طلب کیا گیا اور بھارتی فورسز کی جانب سے کنٹرول لائن اور ورکنگ باؤنڈری پر بلا اشتعال فائرنگ کے نتیجے میں 3 بچوں سمیت 4 افراد کی شہادت پر شدید احتجاج کیا گیا.

یہ بھی پڑھیں:افواہیں دم توڑ گئیں،محمد بن سلمان خیریت سے ہیں:سعودی پریس ایجنسی نے نئی تصویر جاری کردی
سیکرٹری خارجہ نے بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر کو ایک مراسلہ بھی حوالے کیا جس میں کہا گیا ہے کہ پکھلیاں،چپراڑ، ہرپال، چار واہ اور شکر گڑھ سیکٹر میں بھارتی فورسز کی فائرنگ جاری ہے، بھارتی افواج نے سیز فائر معاہدے کی خلاف ورزی کی اورشہری آبادی کو نشانہ بنایا اور فائرنگ کے نتیجے میں گاؤں خان ور میں نور حسین کے گھر کے 4 بے گناہ افراد شہید ہو گئے جن میں نور حسین کی اہلیہ کلثوم، بیٹی مہوش، صفیہ اور بیٹا حمزہ شامل ہیں، جب کہ فائرنگ میں 10 بے گناہ شہری زخمی بھی ہوئے۔
یہ بھی پڑھیں:کرنل سہیل عابد مکمل اعزاز کے ساتھ سپرد خاک، نماز جنازہ میں آرمی چیف کی شرکت
مراسلے میں تحریر ہے کہ بھارتی فورسز کنٹرول لائن اور ورکنگ باؤنڈری پر سول آبادی کو بھاری ہتھیاروں سے نشانہ بنا رہی ہیں، سول آبادی کو جان بوجھ کر نشانہ بنانا انسانی حقوق اور بین الاقوامی قوانین کی خلاف ورزی ہے، سیز فائر کی خلاف ورزیاں خطے کی سلامتی کے لئے خطرہ ہیں۔

یہ بھی پڑھیں:بھارتی فوج کی سیالکوٹ سیکٹر پر بلااشتعال فائرنگ،ایک ہی خاندان کے 4 افراد شہید

بھارتی حکومت اپنی افواج کو کنٹرول لائن اور ورکنگ باؤنڈری پرامن قائم رکھنے کی ہدایت کرے۔قائم مقام سیکرٹری خارجہ نے کہا ہے کہ رواں سال بھارتی فورسز نے سیز فائر کی ایک ہزار 50 سے زائد بار خلاف ورزیاں کیں، بھارتی فائرنگ سےاب تک 28 بے گناہ شہری شہید جب کہ 117 افراد زخمی ہو چکے ہیں، بھارتی حکومت 2003 کے سیز فائر معاہدے کا احترام کرے اور سیزفائر کی خلاف ورزی کے موجودہ اور سابقہ واقعات کی تحقیقات کرائے جب کہ اقوام متحدہ مشن کو سلامتی کونسل کی قراردادوں کے مطابق کام کرنے دیا جائے۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں