لاہور:بالی ووڈ ،ہالی ووڈ،لالی وود ہو یا کھیل کی دنیا کہیں بھی کوئی ستارہ اپنی قسمت کو اپنے ہی ہاتھوں تباہ کر سکتا ہے ۔اور ایسا کرتے وقت شاید اس شخصیت کو احساس ہی نہیں ہوتا کہ آنے والا وقت ان کے لیے کتنا برا ثابت ہوسکتا ہے اور ان کے کرئیر کو تباہ کرسکتا ہے ۔یہاں ہم ایسی ہی کچھ شخصیات کا ذکر کریں گے۔
لنڈسے لوہان


امریکی اداکارہ لنڈسے لوہان کے حوالے سے کئی خبریں سامنے آئیں کہ ہدایت کار ان کے ساتھ کام کرنے میں کوئی دلچسپی نہیں رکھتے جس کی وجہ ان کا منشیات کا استعمال اور فلموں کے سیٹس پر برا رویہ تھا۔
ایان علی


پاکستان کی ٹاپ ماڈلز میں شمار ہونے والی ایان علی منی لانڈرنگ کے مقدمے کا شکار ہوئیں، جس کے بعد ان کا کیریئر ناکامی کی جانب گامزن ہوگیا۔ اس الزام سے قبل ایان علی کئی برانڈز کے اشتہارات کا حصہ ہونے کے ساتھ ساتھ ریمپ پر جلوہ گر ہونے والی بہترین ماڈل مانی جاتی تھیں۔
سلمان بٹ


پاکستان کرکٹ ٹیم کے بہترین کھلاڑی سلمان بٹ کا کیریئر اس وقت زوال پذیر ہوا جب ان پر میچ فکسنگ کا الزام لگا۔ اس کے بعد سلمان بٹ کو کرکٹ ٹیم میں دوبارہ کبھی وہ مقام نہ مل سکا جو ماضی میں ان کے پاس تھا۔
سنجے دت


سنجے دت کا شمار بولی وڈ کے کامیاب اداکاروں میں کیا جاتا تھا تاہم 1993 کے ممبئی حملہ کیس میں غیر قانونی ہتھیار رکھنے کے الزام میں مارچ 2013 میں ہندوستان کی سپریم کورٹ کی جانب سے 5 سال قید کی سزا کے بعد انھیں اپنے کیریئر میں کئی مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔

سنجے دت رواں سال فروری میں 42 ماہ جیل میں گزارنے کے بعد رہا ہوئے تاہم اب تک ان کی کسی فلم کا حتمی فیصلہ سامنے نہیں آیا۔
مائیکل جیکسن


مائیکل جیکسن کے کامیاب کیریئر کو اس وقت مسائل کا سامنا کرنا پڑا جب ان کی زندگی پر بنائی گئی ایک ڈاکیومنٹری ریلیز کی گئی جس میں ان کی ذاتی زندگی سے متعلق کئی راز سامنے آئے، ان سے مختلف جرائم کی تفتیش بھی کی گئی جس کے بعد مائیکل جیکسن کو گرفتار کرلیا گیا تھا۔
جسٹن بیبر


کینیڈا کے گلوکار جسٹن بیبر کی زندگی پر بنائی گئی فلم ‘جسٹن بیبر بلیو‘ باکس آفس پر بری طرح ناکام ہوئی جبکہ نوجوان گلوکار کے جارحانہ رویے کے باعث بھی انھیں متعدد مرتبہ مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔