اسرائیلی پارلیمنٹ نے ’یہودیوں کی قومی ریاست‘ کا متنازع بل منظور کر لیا

اسرائیلی پارلیمنٹ نے ’یہودیوں کی قومی ریاست‘ کا متنازع بل منظور کر لیا

متنازع قانون کے تحت صرف یہودیوں کو ملک میں خودمختاری کا حق ہو گا۔۔۔۔فائل فوٹو

مقبوضہ بیت المقدس: اسرائیلی پارلیمنٹ نے اسرائیل کو ‘صہیونی ریاست’ قرار دینے کا متنازع بل منظور کر لیا جس پر عرب ارکان نے شدید احتجاج کیا۔

 

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق 120 رکنی اسرائیلی پارلیمنٹ میں اسرائیل کو صیہونی ریاست قرار دینے کے بل کے حق میں 62 اور مخالفت میں 55 ووٹ دیے گئے جب کہ 3 ارکان ووٹنگ میں شامل نہ ہوئے۔

 

مزید پڑھیں: امریکاکی بھارت کو مسلح ڈرونز فروخت کرنے کی پیشکش

بل کی منظوری پر اسرائیلی پارلیمنٹ کے عرب ارکان نے شدید احتجاج کیا اور بل کا مسودہ پھاڑتے ہوئے کہا کہ بل نسل پرستی پر مبنی ہے جس میں اقلیتوں کا استحصال کیا گیا ہے۔

 

متنازع قانون کے تحت صرف یہودیوں کو ملک میں خودمختاری کا حق ہو گا جب کہ متنازع بل پر کئی ماہ سے اسرائیلی پارلیمنٹ میں بحث جاری تھی۔ اسرائیلی وزیراعظم بنیامین نیتن یاہو نے ووٹنگ کے بعد ایوان میں کہا کہ آج صیہونیت اور اسرائیلی ریاست کے لیے تاریخی لمحہ ہے۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں