ترکی صدر نے شامی شہر عفرین کا کنٹرول سنبھالنے کی تصدیق کر دی

ترکی صدر نے شامی شہر عفرین کا کنٹرول سنبھالنے کی تصدیق کر دی

انقرہ: ترک افواج اور حامی ملیشیا گروہوں نے شامی علاقے عفرین میں کرد باغیوں کو پسپا کرتے ہوئے عفرین شہر کا کنٹرول سنبھال لیا ہے۔


میڈیا رپورٹس کے مطابق ترک افواج نے کامیاب پیش قدمی کرتے ہوئے شامی ڈسٹرکٹ عفرین کے وسطی شہر عفرین کا کنٹرول سنبھال لیا اور شہر کے مرکزی علاقے میں ترک افواج نے ترکی کا پرچم لہرا دیا ہے۔ادھر کرد باغیوں نے اس عزم کا اظہار کیا ہے کہ وہ عفرین کو ترک فورسز سے آزاد کروائیں گے۔ شامی کردوں نے کہا ہے کہ عفرین کی لڑائی کا ایک نیا باب شروع ہو گیا ہے، اب جنگجو براہ راست لڑائی کے بجائے گوریلا جنگ شروع کریں گے۔

گزشتہ 2 ماہ سے جاری اس لڑائی میں ترک افواج کو مقامی شامی ملیشیا گروہوں کا تعاون بھی حاصل تھا۔ عفرین کی اس لڑائی میں ڈھائی لاکھ شہری متاثر ہوئے ہیں۔ترک صدر نے عفرین شہر پر کنٹرول حاصل کرنے کی تصدیق کردی ہے۔واضح رہے کہ ترک فورسز گزشتہ 2ماہ سے اس علاقے میں فوجی کارروائی میں مصروف تھیں۔