آئین ڈنڈا بردار ملیشیا کی اجازت نہیں دیتا, شاہ محمود قریشی

 آئین ڈنڈا بردار ملیشیا کی اجازت نہیں دیتا, شاہ محمود قریشی
Image Source: File Photo

ملتان: شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ ملک میں مارشل لا کا کوئی امکان نہیں، احتجاج سب کا حق لیکن آئین ڈنڈا بردار ملیشیا کی اجازت نہیں دیتا۔ سیاسی عمل میں مذاکرات سے انکار نہیں کیا جاسکتا۔


 

تفصیلات کے مطابق ، وفاقی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے ملتان میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا وزیراعظم  عمران خان نے ایران اور سعودی عرب کے دورے کیے، وزیراعظم کی کوشش ہے خطےمیں کوئی تنازع نہ ہو، دونوں ممالک نے اتفاق کیا کہ معاملات کو سفارتکاری کے ذریعے حل ہونا چاہیے۔

 

وزیر خارجہ نے کہا کہ پاکستان میں جمہوریت کا مستقبل روشن ہے، معیشت کی بہتری کیلئے خطے میں امن و استحکام قائم رکھنا ہوگا۔ پاکستان کو بلیک لسٹ میں ڈالنے کی بھارتی کوششیں ناکام ہوگئیں۔  بھارتی وزیر خارجہ نے ہر ملک سے پاکستان کی مخالفت کی اپیل کی، ہماری سفارتی کوششوں کا نتیجہ ہے ہم بلیک لسٹ نہیں ہوئے۔

 

انہوں نے کہا کہ  پاکستان کے عوام کشمیر کی صورتحال کو سمجھتے ہیں، عوام انتشار کا حصہ نہیں بنیں گے، آئندہ سندھ میں حکومت پی ٹی آئی اور اتحادیوں کی ہوگی۔ لاڑکانہ کا ضمنی الیکشن بارش کا پہلا قطرہ ہے، بلاول بھٹو نے الیکشن کمیشن کے ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کی، چیئرمین پیپلزپارٹی نے 5 روز تک حلقے میں مہم چلائی۔

 

شاہ محمود قریشی نے مزید کہا کہ جو لوگ احتجاج کرنا چاہتے ہیں ان کو پر امن طریقے سے کرنا چاہیے۔