خیبر پختونخوا اسمبلی نے خواتین کو ہراساں ہونے سے بچانے کا بل منظور کر لیا

خیبر پختونخوا اسمبلی نے خواتین کو ہراساں ہونے سے بچانے کا بل منظور کر لیا

پشاور: خیبرپختونخوا اسمبلی نے خواتین کو دفاتر اور کام کرنیوالی جگہوں پر ہراساں ہونے سے بچانے، انفارمیشن ٹیکنالوجی بورڈ کے قیام اور پبلک سروس کمیشن کے ترمیمی بلوں کی منظوری دیتے ہوئے پاورز آف اٹارنی ترمیمی بل، مخصوص ریلیف سے متعلق ترمیمی بل اور پروکیورمنٹ اتھارٹی کے دو ترمیمی بلوں کو ایوان میں پیش کر دیا گیا ہے۔

صوبائی وزیر قانون امتیاز شاہد قریشی کی جانب سے ایوان میں پیش کردہ خواتین کو کام کرنے والے مقامات پر ہراساں ہونے سے بچانے اور خاتون محتسب کی تقرری سے متعلق بل ایوان میں پیش کیا جس کے تحت مرد کے ساتھ خاتون محتسب کی تقرری بھی ممکن ہو جائے گی ۔

محتسب کیلئے صرف ہائی کورٹ کے ریٹائرڈ جج ہونے کے ساتھ 15 سالہ قانونی امور کا تجربہ رکھنے والے ریٹائرڈ سرکاری ملازم کی تقرری کی راہ بھی ہموار ہو جائے گی۔

 

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں