نقیب اللہ کیس میں وزیراعلیٰ اور وزیرداخلہ کو بھی کٹہرے میں لانا چاہیے، فاورق ستار

نقیب اللہ کیس میں وزیراعلیٰ اور وزیرداخلہ کو بھی کٹہرے میں لانا چاہیے، فاورق ستار

کراچی: ایم کیو ایم پاکستان کے سربراہ ڈاکٹر فاروق ستار کہتے ہیں کہ نقیب اللہ کی مبینہ پولیس مقابلے میں ہلاکت پہلا واقعہ نہیں، معاملے کا سارا ملبہ صرف راؤ انوار پر ڈالنے سے مسئلہ حل نہیں ہو  گا۔


فاروق ستار نے کراچی اے ٹی سی کے باہر میڈیا سے گفتگوکرتے ہوئے کہا کہ نقیب اللہ ماروائے عدالت قتل کے معاملے پر وزیراعلیٰ اور وزیر داخلہ سندھ کو بھی کٹہرے میں لانا چاہیے۔ عدالتیں سندھ حکومت کے خلاف بھی ازخود نوٹس لیں۔

ان کا کہنا تھا کہ کراچی آپریشن کا مطالبہ ایم کیوایم نے کیا تھا جس کے بعد شہر میں امن قائم ہوا اور اور جرائم میں نمایاں کمی واقعہ ہوئی ۔ سربراہ ایم کیو ایم پاکستان کا کہنا تھا کہ کراچی کے ووٹ ایم کیوایم پاکستان کے پاس ہیں، ہمارے خلاف جھوٹے اور بے بنیاد مقدمات قائم ہوئے ۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ جھوٹے مقدمات میں تاریخ پر تاریخ ملتی ہے اور اگر مقدمات سچے ہوں تو انصاف کی فراہمی میں وقت نہیں لگتا۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں

نیوویب ڈیسک< News Source