علم سے محبت ، معذور طالبہ عزم و حوصلے کی زندہ مثال بن گئی

وہاڑی: 12 جماعت کی معذزور طالبہ نے تعلیم سے اپنی محبت ظاہر کرتے ہوئے عزم و حوصلے کی زندہ مثال قائم کر دی۔

علم سے محبت ، معذور طالبہ عزم و حوصلے کی زندہ مثال بن گئی

وہاڑی: 12 جماعت کی معذور طالبہ نے تعلیم سے اپنی محبت ظاہر کرتے ہوئے عزم و حوصلے کی زندہ مثال قائم کر دی۔


وہاڑی سے تعلق رکھنے والی طالبہ فرحانہ حنیف نے  اپنے دونوں ہاتھوں سے محروم ہونے کے با وجود تعلیم سے اپنی محبت کو عروج تک پہنچا دیا ، وہ پہلی جماعت سے تعلیم حاصل کرتے ہوئے ان دنوں سکینڈ ائیر کے سالا نہ امتحانات میں شریک ہے ۔ وہ اپنے پا ﺅں کی مد د سے لکھتی ہے اور امتحانات میں بھی پا ﺅں سے لکھ کر پیپر حل کررہی ہے۔

اس کا کہنا ہے کہ پیدائشی طور پر کہنیوں تک دونوں ہا تھوں سے محروم ہونے کے با وجود اس نے اپنی معذوری کو مجبوری نہیں بننے دیا اور بغیر کسی سہارے کے اپنے کام خود کرتی ہے۔اسکی والدہ بھی وفات پا چکی ہیں اور اس کی رہنما ئی کرنے والا کوئی بھی خاتون گھر میں نہیں ہے اس کے با وجود اس نے ہمت نہیں ہاری۔