خیبرپختونخواءترقی کے اعتبار سے جنوبی پنجاب اور سندھ سے بھی پیچھے

خیبرپختونخواءترقی کے اعتبار سے جنوبی پنجاب اور سندھ سے بھی پیچھے
کیپشن:   فوٹو: فائل

اسلام آباد: اقوام متحدہ کے ترقیاتی پروگرام نے پاکستان نیشنل ہیومن ڈویلپمنٹ 2017 رپورٹ جاری کردی جس کے مطابق ترقی کے اعتبار سے خیبرپختونخوا، جنوبی پنجاب اور سندھ سے بھی پیچھے ہے۔

رپورٹ کے مطابق پنجاب میں 83 فیصد افراد کا معیار زندگی بہتر ہے، سندھ میں 67.6 فیصد، خیبرپختونخوا میں 67.1 فیصد اور بلوچستان میں صرف 33.9 فیصد افراد کا معیار زندگی بہتر ہے۔ترقی کے حوالے سے ہیومن انڈیکس ٹیبل پر پنجاب کے 0.732 پوائنٹس، سندھ کے 0.640، خیبر پختونحوا کے 0.628 پوائنٹس اور بلوچستان کے 0.421 پوائنٹس ہیں۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ انفرااسٹرکچر، میٹرو بس پروجیکٹ، اورنج ٹرین اور دیگر منصوبے پنجاب کی پہچان بن گئے ہیں جہاں انسانی ترقی کے تصور کو عملی صورت میں ڈھال دیا گیا ہے۔انسانی ترقی کے لحاظ سے پنجاب کے 6 اضلاع یو این ڈی پی کی رینکنگ میں شامل ہیں جب کہ خیبرپختونخوا انسانی ترقی میں خاطر خوا کامیابی حاصل نہ کرسکا اور اس کا کوئی ضلع اس رینکنگ میں شامل نہیں ہے۔

رپورٹ کے مطابق میڈیم ڈویلپمنٹ ڈسٹرکٹ میں پنجاب کے 19 اور خیبرپختونخوا کے 4 اضلاع شامل ہیں جب کہ تعلیم اور صحت میں بھی پنجاب دیگر صوبوں سے آگے ہے۔تعلیم اور صحت میں بھی پنجاب دیگر صوبوں سے آگے ہے جہاں صحت کی تسلی بخش سہولتوں کا تناسب 78 فیصد ہے جب کہ خیبرپختونخوا میں صحت کی تسلی بخش سہولتوں کا تناسب 73 فیصد ہے۔رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ پنجاب میں مختلف بیماریوں سے بچاو کی شرح 89 فیصد ،خیبر پختونخوا میں 78 فیصد، سندھ میں 73 فیصد اور بلوچستان میں یہ شرح 51 فیصد ریکارڈ کی گئی ہے۔