سعودی عرب میں مقیم غیر قانونی تارکین وطن کو نئی مہلت

سعودی عرب میں مقیم غیر قانونی تارکین وطن کو نئی مہلت

ریاض: سعودی حکومت نے غیر قانونی تارک وطن افراد کو باعزت طریقے سے اپنے آبائی ملک جانے کے لیے مزید 60 دن کی مہلت دینے کا اعلان کردیا ہے۔


سعودی جنرل ڈائریکٹوریٹ آف پاسپورٹ (جی ڈی پی) کے قوانین کے تحت ایسے غیر ملکی باشندے جو اقامہ (ریذیڈینسی پرمٹ) ختم ہونے کے باوجود سعودی عرب میں موجود ہیں انہیں مزید 60 دن کی مہلت دی جارہی ہے تاکہ وہ باعزت طریقے سے سعودی عرب چھوڑ سکیں۔حکام کا کہنا ہے کہ ایسے غیر ملکی شہری جنہیں نئی پالیسی کے تحت ملک چھوڑنے کی مہلت ملے گی وہ 60 دن سے زائد وقت سعودی عرب میں نہیں گزار سکیں گے۔

جنرل ڈائریکٹوریٹ آف پاسپورٹ نے اپنے آفیشل ٹوئٹر اکانٹ پر اس بات کی اس وقت مزید وضاحت اس وقت کی جب ایک غیر ملکی نے پوچھا کہ میرے پاس فائنل ایگزٹ ویزا ہے اور میرا اقامہ ختم ہوچکا ہے تو کیا یہ کوئی پریشان کن بات ہے؟ جواب دیا  گیا  کہ یہ کوئی مسئلہ نہیں، فائنل ایگزٹ ویزا   کی تاریخ سے 60 دن کے اندر اندر آپ کو سعودی عرب چھوڑنا ضروری ہے۔

خیال رہے کہ سعودی پولیس نے مملکت میں غیر قانونی قیام کرنے والے غیر ملکی باشندوں کے خلاف کریک ڈان کرتے ہوئے 3 روز میں 24 ہزار غیر ملکیوں کو گرفتار کرلیا ہے۔

نیوویب ڈیسک< News Source