بھارت اور سری لنکا کے درمیان پہلا ٹیسٹ میچ ڈرا

بھارت اور سری لنکا کے درمیان پہلا ٹیسٹ میچ ڈرا

کولکتہ: بھارت اور سری لنکا کے درمیان تین ٹیسٹ میچوں کی سیریز کا پہلا ٹیسٹ بغیر کسی نتیجے کے اختتام پذیر ہوگیا، آخری روز سری لنکا کی ٹیم 231 رنز کے تعاقب میں سات وکٹوں کے نقصان پر 75 رنز بنا سکی اور کم روشنی کی وجہ سے میچ مقررہ وقت سے پہلے ختم کر دیا گیا جس کی بدولت سری لنکا یقینی شکست سے بچ گیا۔


کولکتہ میں ٹیسٹ کے پانچویں اور آخری روز بھارت نے اپنی دوسری نامکمل اننگز 171 رنز ایک کھلاڑی آو¿ٹ پر دوبارہ شروع کی تو لوکیش راہول 73 اور چیتشوار پجارا 2 رنز پرکریز پر موجود تھے۔ راہول گزشتہ روز کے اسکور میں صرف چھ رنز کا اضافہ کرنے کے بعد سورنگا لکمل کی گیند پر بولڈ ہوگئے جبکہ پجارا بھی لمبی اننگز کھیلنے میں ناکام رہے اور 22 رنز بنانے کے بعد لکمل کا نشانہ بن گئے۔کپتان ویرات کوہلی نے ایک اینڈ سے عمدہ بیٹنگ کا سلسلہ جاری رکھا اور 104 رنز کی ناقابل شکست اننگز کھیل کر ٹیم کی پوزیشن کو مضبوط کر دیا۔بھارت نے 352 رنز 8 کھلاڑی آو¿ٹ پر اننگز ڈیکلیئر کرکے سری لنکا کو جیت کیلئے 231 رنز کا ہدف دیا۔

ہدف کا تعاقب سری لنکا کے دونوں اوپنرز دو رنز پر پویلین لوٹ گئے۔ اسکور 14 تک پہنچا ہی تھا کہ بھونیشور کمار نے لہیرو تھریمانے کی اننگز کا خاتمہ کردیا جبکہ امیش یادو نے اینجلو میتھیوز کو آو¿ٹ کیا تو سری لنکن ٹیم 22 رنز پر چار وکٹوں سے محروم ہو چکی تھی۔اس موقع پر دنیش چندیمل اور نروشن ڈکویلا نے ذمے دارانہ بیٹنگ کا مظاہرہ کیا اور بھارتی باو¿لرز کے خلاف ڈٹ گئے، دونوں کھلاڑیوں نے اسکور 69 تک پہنچایا ہی تھا کہ محمد شامی نے سری لنکن کپتان کی مزاحمت کا خاتمہ کردیا۔ڈکویلا سے بھی کپتان کی جدائی برداشت نہ ہوئی اور وہ بھی دو گیندوں بعد بھونیشور کمار کو وکٹ دے کر پویلین لوٹ گئے جبکہ دلرووان پریرا بھی صرف سات گیندوں کے مہمان ثابت ہوئے۔

اس موقع پر سری لنکا 75 رنز پر سات وکٹیں گنوا کر یقینی شکست کے خطرے دوچار تھا کیونکہ میچ میں اب بھی 20 اوورز کا کھیل باقی تھا لیکن کم روشنی کے باعث امپائرز نے میچ کو مقررہ وقت سے پہلے ختم کرنے کا اعلان کردیا۔سری لنکا کی جانب سے نروشن ڈکویلا 27، کپتان دنیش چندیمل 20 اور اینجلو میتھیوز 12 رنز کے ساتھ نمایاں رہے۔بھارت کی جانب سے بھونیشور کمار نے چار اور محمد شامی نے دو وکٹیں حاصل کیں۔بھونیشور کمار کو میچ میں مجموعی طور پر 8 وکٹیں لینے پر بہترین پلیئر کا ایوارڈ دیا گیا۔