طاہر داوڑ قتل کیس کی جے آئی ٹی کے سربراہ کو تبدیل کر دیا گیا

 طاہر داوڑ قتل کیس کی جے آئی ٹی کے سربراہ کو تبدیل کر دیا گیا
طاہر داوڑ کیس ہائی پروفائل ہے اس لیے سینئر افسر کو جے آئی ٹی کی سربراہی سونپی گئی، ذرائع۔۔۔۔۔فائل فوٹو

پشاور: ایس پی طاہر داوڑ قتل کیس کی تحقیقات کے لیے بنائی گئی جے آئی ٹی کے سربراہ کو تبدیل کر دیا گیا۔چیف کمشنر اسلام آباد نے پشاور پولیس کے ایس پی طاہر داوڑ کے قتل کی تحقیقات کے لیے جے آئی ٹی کا نوٹی فکیشن جاری کیا تھا جس کی سربراہی ایس پی سی آئی اے گلفام ناصر کو سونپی گئی تھی جب کہ جے آئی ٹی میں حساس ادارے کے افسران بھی شامل ہیں۔


ذرائع کے مطابق طاہر داوڑ قتل کیس کی تحقیقات کرنے والی مشترکہ تحققیاتی ٹیم کے سربراہ کو تبدیل کر دیا گیا ہے اور جے آئی ٹی کی سربراہی اب ایس پی سی آئی اے گلفام ناصر سے لے کر ڈی آئی جی آپریشن فیصل راجہ کو سونپ دی گئی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ طاہر داوڑ کیس ہائی پروفائل ہے اس لیے سینئر افسر کو جے آئی ٹی کی سربراہی سونپی گئی۔

واضح رہے کہ خیبرپختونخوا کے ایس پی طاہر داوڑ اسلام آباد کے علاقے جی ٹین سے 26 اکتوبر کو لاپتہ ہوئے جن کی لاش دو روز قبل افغانستان کے صوبہ ننگرہار سے ملی اور دفتر خارجہ نے بھی ان کی شہادت کی تصدیق کی۔