وزیراعظم نواز شریف کے استعفیٰ کیلئے عمران خان نے احتجاجی جلسے کا اعلان کر دیا

وزیراعظم نواز شریف کے استعفیٰ کیلئے عمران خان نے احتجاجی جلسے کا اعلان کر دیا

اسلام آباد: پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کل  پاناما لیکس کا فیصلہ آنے کے بعد  وزیراعظم کیخلاف سڑکوں پر آنے کا فیصلہ کر لیا۔ عمران خان کا کہنا ہے کہ وزیراعظم نواز شریف عہدے پر رہنے کا اخلاقی جواز کھو بیٹھے ہیں۔ لہٰذا ان کو مستعفی ہو جانا چاہیے۔ 


پارلیمنٹ ہاؤس میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے عمران خان کا کہنا تھا کہ گزشتہ روز سپریم کورٹ کے ججز نے وزیراعظم کے حوالے سے جو تاریخی ریمارکس دیئے وہ اس سے پہلے کبھی نہیں سنے، سپریم کورٹ کے سینئر ججز نے کہا کہ نوازشریف نا اہل ہیں کیونکہ انہوں نے جھوٹ بولا جب کہ دنیا کے کسی ملک میں اگر ججز کی جانب سے وزیر اعظم کے لیے اس طرح کی رائے دی جاتی ہے تو وزیراعظم کی پارٹی کے ممبران ہی ان سے استعفیٰ کا مطالبہ کر دیتے ہیں۔

عمران خان نے کہا کہ ججزکی جانب سے نوازشریف کے لیے ان ریمارکس کے بعد پارٹی ممبران کیسے عوام کے پاس جائیں گے، ڈیوڈ کیمرون کوکیا ضرورت تھی استعفی دینے کی لیکن اس نے کہا کہ میرا وزیراعظم رہنے کا اخلاقی جوازختم ہوگیا، سپریم کورٹ نے قطری کا خط بھی مسترد کردیا۔

عمران خان نے کہا کہ عدالت نے ہمارے الزامات پر جے آئی ٹی بنائی ہے، ایک طرف سپریم کورٹ کہتی ہے کہ انصاف کے ادارے مفلوج ہو گئے ہیں، نیب کی کارکردگی سب کے سامنے ہے تو اب یہ ہی ادارے نواز شریف کے وزیراعظم ہوتے ہوئے کیسے تحقیقات کریں گے. اداروں نے کام کرنا ہوتا تو نوازشریف کب کے پکڑے جا چکے ہوتے.