اسپاٹ فکسنگ کیس: شرجیل خان کا پابندی کو چیلنج نہ کرنیکا فیصلہ

اسپاٹ فکسنگ کیس: شرجیل خان کا پابندی کو چیلنج نہ کرنیکا فیصلہ
image by facebook

لاہور:  پی ایس ایل اسپاٹ فکسنگ اسکینڈل میں سزا یافتہ شرجیل خان نے 5 سال کی پابندی کو چیلنج نہ کرنے کا فیصلہ کر لیا، بلے باز پر آئندہ سال ستمبر میں کرکٹ کے دروازے کھلنے کاامکان ہے۔


پی ایس ایل اسپاٹ فکسنگ کیس میں سزا یافتہ شرجیل خان نے پابندی کو چیلنج نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ بلے باز پی سی بی کے بحالی پروگرام میں شرکت کرنے کے خواہشمند ہیں۔ شرجیل پر پانچ سال کی پابندی عائد کی گئی تھی۔

سابق اوپنر نے پی سی بی سے تعاون پر ستمبر دو ہزار انیس سے انٹرنیشنل کرکٹ میں واپسی کے اہل ہو سکتے ہیں۔

انسداد کرپشن کوڈ کے مطابق پی سی بی پابندی کے شکار کسی بھی کھلاڑی کو ڈومیسٹک کھیلنے کی اجازت دے سکتا ہے۔شرجیل خان پہلے ہی چیئرمین پی سی بی احسان مانی سے اپنی سزا پرنظر ثانی کی اپیل کر چکے۔ بلے باز پاکستان کی طرف سے ایک ٹیسٹ، پچیس ون ڈے اور 15 ٹی ٹونٹی میچز کھیل چکے ہیں۔