لاہور ہائیکورٹ نے ننھی زینب قتل کیس کے مجرم عمران کی سر عام پھانسی کی درخواست نمٹادی

لاہور ہائیکورٹ نے ننھی زینب قتل کیس کے مجرم عمران کی سر عام پھانسی کی درخواست نمٹادی

لاہور:ہائیکورٹ نے قصور کی ننھی زینب قتل کیس کے مجرم عمران کی سر عام پھانسی کی درخواست کو قبل از وقت قرار دیکر نمٹا دیا ۔


ذرائع کے مطابق لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس صداقت علی خان کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے درخواست پر سماعت کی۔درخواست گزار نے زینب قتل کیس کے مجرم عمران کو سرعام پھانسی دینے کی استدعا کی اور کہا کہ ننھی بچی کے قاتل کو اسی مقام پر پھانسی دی جائے جہاں سے زینب کی لاش ملی تھی۔

عدالت نے درخواست نمٹا دی اور قرار دیا کہ جب تک مجرم کی تمام اپیلیں مسترد نہیں ہوجاتیں اس وقت تک پھانسی کے حکم پر عمل درآمد نہیں ہوسکتا۔خیال رہے کہ 7 سالہ ننھی زینب کو زیادتی کے بعد قتل کرنے والے مجرم عمران کو چار بار پھانسی کی سزا کا فیصلہ سنایا گیا تھا۔