تھرپارکر ضمنی انتخابات: پولنگ ختم،ووٹوں کی گنتی شروع

تھرپارکر ضمنی انتخابات: پولنگ ختم،ووٹوں کی گنتی شروع
کیپشن:   تھرپارکر ضمنی انتخابات: پولنگ ختم،ووٹوں کی گنتی شروع سورس:   فائل فوٹو

تھرپارکر: تھرپارکر کے حلقہ این اے 221 کے ضمنی الیکشن میں پولنگ کا عمل مکمل ہونے کے بعد ووٹوں کی گنتی شروع کر دی گئی ۔ قومی اسمبلی کے اس حلقے میں پیپلز پارٹی کے پیر امیر علی شاہ اور پی ٹی آئی کے نظام الدين راہموں میں سخت مقابلہ متوقع ہے۔

ضمنی الیکشن کے دوران صورتحال اس وقت کشیدہ ہو گئی جب چھاچھرو میں‌ شرپسندوں‌ نے بیلٹ باکس سمیت دیگر سامان جلا دیا، تاہم پولیس نے چار ملزمان کو گرفتار کر لیا ہے۔حلقہ قومی اسمبلی تھرپارکر 221 میں پیپلزپارٹی اور پی ٹی آئی سمیت 12 امیدوار مدمقابل تھے۔ اس حلقے میں ووٹرز کی تعداد 2 لاکھ 81 ہزار 900 ہے۔ پولنگ صبح 8 بجے شروع ہوئی جو شام 5 بجے تک جاری رہی۔

حلقے میں پولنگ سٹیشنز کی کل تعداد 318 ہے جن میں سے 95 انتہائی حساس اور 130 کو حساس قرار دیا گیا تھا۔حلقے میں سکیورٹی کے سخت اقدامات کئے گئے تھے۔ اس سلسلے میں 4 ہزار پولیس اہلکاروں، ایک ہزار رینجرز کے جوانوں سکو کیورٹی پر تعینات کیا گیا تھا۔خیال رہے کہ قومی اسمبلی کی یہ نشست پیپلز پارٹی کے رکن اسمبلی پیر نور محمد شاہ جیلانی کے انتقال کے بعد خالی ہوئی تھی۔