خیبرپختونخوا کا 15 ستمبر کو تمام تعلیمی ادارے کھولنے کا فیصلہ

خیبرپختونخوا کا 15 ستمبر کو تمام تعلیمی ادارے کھولنے کا فیصلہ
تعلیمی اداروں میں کورونا سے متعلق ایس او پیز پر سختی سے عمل درآمد کیا جائے گا، کامران خان بنگش۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔فائل فوٹو

پشاور: معاون خصوصی برائے اطلاعات خیبرپختونخوا کامران بنگش نے کہا ہے کہ صوبائی حکومت نے 15 ستمبر سے مدارس سمیت تمام تعلیمی اداروں کو کھولنے کا فیصلہ کیا ہے۔ پریس کانفرنس کرتے ہوئے معاون خصوصی برائے اطلاعات خیبرپختونخوا کامران بنگش نے صوبائی کابینہ نے 15 ستمبر سے تعلیمی ادارے کھولنے کا فیصلہ کیا ہے۔


کامران خان بنگش کا کہنا تھا کہ  تمام اسکولز، کالجز، یونیورسٹیاں اور مدارس 15 ستمبر کو کھولے جائیں گے۔ انھوں نے کہا کہ  تعلیمی اداروں میں کورونا سے متعلق ایس او پیز پر سختی سے عمل درآمد کیا جائے گا۔کامران بنگش کا کہنا تھا کہ ایس او پیز پر عمل درآمد نہ کرنے والے تعلیمی ادارے کو فوری طور پر بند کردیا جائے گا۔

انھوں نے بتایا کہ کابینہ اجلاس میں سرمایہ کاری سے متعلق قوانین بہتر بنانے کا فیصلہ ہوا ہے۔

کامران بنگش کا کہنا تھا کہ تعمیراتی شعبے میں 4 ارب روپے ریلیف پیکیج اور  شہریوں کو لوکل کونسل ٹیکس سے مستثنی قرار دیا جائے گا۔

ان کا کہنا تھا کہ اجلا میں مقررہ قیمتوں پر آٹے کی فراہمی کی ہدایت کی گئی۔ انھوں نے بتایا کہ مختلف سرکاری محکموں کے 85 گیسٹ ہاؤسز محکمہ سیاحت کے حوالے کیے جائیں گے۔