چیئرمین عمران خان کے زیر صدارت تحریک انصاف کے قائدین کا اہم اجلاس

اسلام آباد:  اسلام آباد میں پاکستان تحریک انصاف کے قائدین کا اہم اجلاس بدھ کومنعقد ہوا۔ تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے اجلاس کی صدارت کی۔ اجلاس میں ملکی مجموعی سیاسی صورتحال پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔ تحریک انصاف کی جاری تفصیلات کے مطابق اجلاس کے شرکا نے ایک میڈیاگروپ کو ساتھ ملاکر حکومت کی سپریم کورٹ پر زبانی یلغار کا مفصل جائزہ لیا۔جے آئی ٹی کی جانب سے پانامہ لیکس کی تحقیقات اور حکمران جماعت کی مزاحمت پر بھی بات چیت ہوئی۔

اجلاس میں اس بات پر اتفاق کیا گیا کہ پانامہ لیکس پر نوازشریف اور انکا خاندان جوابی الزام تراشی کی بجائے اپنی صفائی میں کچھ بھی پیش کرنے میں ناکام رہا ہے۔ اور یہ کہ شریف خاندان کی بدن بولی سے پانامہ کیس کا مستقبل عیاں ہوچکا ہے۔سپریم کورٹ کے ججز کے ریمارکس کے بعد کوئی شبہ نہیں کہ وزیر اعظم کی ایماء پر عدلیہ اور جے آئی ٹی کو بلیک میل کیا جارہا ہے۔حکمران جماعت کو اپنے ناپاک مقاصد کے حصول میں مخصوص میڈیا گروپ اور اس سے وابستہ دانشوروں کی معاونت حاصل ہے۔بلاشبہ سوچے سمجھے منصوبے کے تحت عدلیہ اور جے آئی ٹی کیخلاف زہریلا پراپیگنڈہ کیا جارہا ہے۔اجلاس میں حکمران جماعت اور شریف خاندان کی جانب سے ملک میں انتشار کی کوششوں کا بھی جائزہ لیا گیا۔ مرکزی میدیا ڈیپارٹمنٹ کی جاری کردہ خبر کے مطابق اجلاس کے شرکا نے خود کو بچانے کیلئے نظام زمین بوس کرنے کا نون لیگی منصوبہ ناکام بنانے کے عزم اور قومی اسمبلی کے سپیکر کی سیاسی تقاریر پر شدید ناگواری کا اظہارکیا۔ ایاز صادق نے شریف خاندان کی چاکری میں پارلیمان اور سپیکر کے منصب کو داغدار کرنے کی کوشش کی ہے۔

نوازشریف نے ایاز صادق جیسے وظیفہ خوار ہر ادارے پر مسلط کررکھے ہیں۔اجلاس میں پنجاب میں میڈیا نمائندوں پر جامعہ زرعیہ کے محافظوں کے تشدد کی شدید الفاظ میں مذمت کی گئی۔اوروائس چانسلر سمیت اعلیٰ انتظامی عہدیداران کیخلاف کارروائی کا مطالبہ کیا گیا.

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں