سعودی شوریٰ اراکین کی نماز کے اوقات میں تجارتی ادارے بند کرنے کی پابندی ختم کرنے کی سفارش

سعودی شوریٰ اراکین کی نماز کے اوقات میں تجارتی ادارے بند کرنے کی پابندی ختم کرنے کی سفارش
سورس: فوٹو: بشکریہ ٹوئٹر

ریاض: سعودی عرب کے اراکین شوریٰ نے مملکت میں نماز کے اوقات کے دوران تجارتی ادارے بند کرنے کی پابندی ختم کرنے کی سفارش کر دی ہے۔ 

تفصیلات کے مطابق سعودی اراکین شوریٰ نے جمعتہ المبارک کا دن مستثنیٰ رکھنے اور پیٹرول سٹیشنز اور فارمیسیز پر سے بھی اوقات نماز کے دوران انہیں بند رکھنے کی پابندی اٹھانے کی سفارش کی ہے۔ سعودی میڈیا کے مطابق وزارت اسلامی امور کی رپورٹ پر تیار سفارش اسلامی و عدالتی امور کی کمیٹی کے سامنے رکھ دی گئی ہے۔ 

ذرائع کا کہنا ہے کہ اوقات نماز کے دوران تجارتی ادارے بند رکھنے کی پابندی اٹھانے پرآج ایوان میں ووٹنگ ہوگی۔ اراکین شوریٰ کے مطابق نماز کے دوران تجارتی مراکز بند کرنے کا رواج پوری مسلم دنیا میں سعودی عرب کے سوا کہیں نہیں، سعودی عرب میں نماز کے اوقات کے دوران کاروبار بند کرنے کا سلسلہ چند عشروں سے ہے۔

اراکین شوریٰ کے مطابق تجارتی ادارے عوام کی خدمت اور دیگر سرکاری و نجی اداروں کی طرح ان کا کام بھی روزگار کا حصول ہے، سرکاری اور نجی ادارے اوقات نماز میں بند نہیں ہوتے، اس لئے تجارتی اداروں پر سے بھی اوقات نماز کے دوران بند کرنے کی پابندی اٹھانی چاہئے۔