ریا چکربورتی کا الزام،سارہ علی خان اور شردھا کپور کے گرد گھیراتنگ

ریا چکربورتی کا الزام،سارہ علی خان اور شردھا کپور کے گرد گھیراتنگ

ممبئی:بھارت اداکار سشانت سنگھ راجپوت کی خودکشی کے بعد اٹھنے والا طوفان ہے کہ تھمنے کا نام نہیں لے رہا ،اداکار کی محبوبہ ریا چکربورتی کو نار کوٹکس بیورو نے 8 ستمبر کو رواں برس جون میں خودکشی کرنے والے اداکار سشانت سنگھ کے لیے منشیات کا بندوبست کرنے کے الزام میں گرفتار کیا تھا۔اسی سلسلے میں اداکارہ سارہ علی خان اور شردھا کپور کے گرد گھیراتنگ کردیاگیاہے۔


ریا چکر بورتی نے انسداد منشیات (این سی بی) کو دیے گئے بیان میں کہا تھا  کہ سارہ علی خان اور دیگر چند لوگ بھی ڈرگ سکینڈل میں ملوث تھے۔

بھارتی ویب سائٹ ٹائمز ناؤ  کی رپورٹ کے مطابق ، بالی ووڈ کی دونوں اداکاراؤں کو سشانت سنگھ راجپوت کی موت کے معاملے سے متعلق منشیات کی تحقیقات کے سلسلے میں بلایا جارہا ہے جس کے لئے ممکنہ طورپر نارکوٹکس بیورو آج اداکاراؤں کوسممن جاری کرے گا۔

 ریا چکرورتی نے مبینہ طور پر این سی بی کو اپنے بیان میں سارہ کا نام لیا تھا جبکہ اس معاملے سے شردھا کا تعلق یہ ہے کہ انہوں نے سشانت کے لوناوالا فارم ہاؤس میں ‘چھچھورے ’ کی کامیابی کا جشن منایا ، جہاں مبینہ طور پر منشیات استعمال کی جاتی تھیں۔

خیال رہے کہ نار کوٹکس بیورو نے ریا چکربورتی کو 8 ستمبر کو رواں برس جون میں خودکشی کرنے والے اداکار سشانت سنگھ کے لیے منشیات کا بندوبست کرنے کے الزام میں گرفتار کیا تھا۔

ریا چکربورتی کو مسلسل تین دن تک تفتیش کے بعد اس وقت گرفتار کیا گیا جب انہوں نے نارکوٹکس حکام کے سامنے اعتراف کیا تھا کہ وہ سابق بوائے فرینڈ سشانت سنگھ کے لیے منشیات کا بندوبست کرتی رہی تھیں۔

ریا چکربورتی سے قبل ہی نارکوٹکس بیورو نے ان کے بھائی شووک چکر بورتی اور سشانت سنگھ راجپوت کے منیجر سیموئل مرنڈا اور باورچی دیپیش ساونت کو بھی گرفتار کیا تھا جب کہ اداکارہ سمیت اب تک مجموعی طور پر 10 افراد کو گرفتار کیا جا چکا ہے۔

ریا چکربورتی کو گرفتار کیے جانے کے بعد ایک رات نارکوٹکس کے دفتر میں ہی رکھا گیا تھا، تاہم بعد ازاں 9 ستمبر کی صبح کو ہی انہیں ممبئی کی بدنام زمانہ بائکُلا جیل منتقل کردیا گیا تھا۔

جیل میں دو راتیں گزارنے کے بعد ریا چکربورتی کے وکیل نے ممبئی کی خصوصی عدالت میں ضمانت کی درخواست دائر کی تھی، تاہم عدالت نے ان کی درخوست مسترد کردی تھی۔