پیرس: فرانسیسی حکام کے مطابق حملہ آور کا نام "Karim Cheurfi" تھا اور وہ ایک سزا یا فتہ مجرم تھا۔ ابتدائی تحقیقات کے مطابق 39 سالہ مجرم کے داعش کے ساتھ کسی قسم کے رابطے کے کوئی شواہد نہیں ملے لیکن پولیس کے مطابق کریم چار بار مختلف جرائم میں جیل کی سزا کاٹ چکا تھا۔

دوسری جانب انتہائی دائیں بازو کی صدارتی امیدوار Marine Le Pen نے ملک میں مجرمہ رویہ پھیلانے والی مساجد کو بند کرنے کا مطالبہ کر دیا۔

واضح رہے کہ جمعرات کو فرانس کے دارالحکومت پیرس میں ایک مسلح حملہ آور کی فائرنگ سے ایک پولیس اہلکار ہلاک اور دو زخمی ہو گئے جبکہ دولتِ اسلامیہ نے حملے کی ذمہ داری قبول کی تھی۔ 

 

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں