بورے والا:اوباش لڑکوں کا امام مسجد پر بہیمانہ تشدد،ہسپتال پہنچا دیا

بورے والا:اوباش لڑکوں کا امام مسجد پر بہیمانہ تشدد،ہسپتال پہنچا دیا

بورے والا :  نواحی گاوں میں بااثر زمینداروں کے بیٹوں نے مسجد میں داخل ہو کر امام مسجد پر بہیمانہ تشدد کر کے زخمی کر دیا۔لڑکوں نے لوہے کی سلاخوں اور ڈنڈوں سے مار کرامام مسجد کو زخمی کردیا۔ امام مسجد کو زخمی حالت میں تحصیل ہیڈکوارٹر ہسپتال منتقل کر دیا گیا۔ امام مسجد کے مطابق اس نے ملزمان کو مسجد میں شرارتیں کرنے سے روکا تھا۔

تفصیلات کے مطابق نواحی گاﺅں447ای بی میں بااثر زمینداروں کے دو بیٹیوں کا امام مسجد پر وحشیانہ تشدد،ملزمان کو مسجد میں غیر اخلاقی حرکات سے منع کیا تو انہوں نے مسجد میں آکر امام مسجد کو لوہے کی سلاخوں اور ڈنڈوں سے مار مار کر بے حال کر دیا۔ بورے والا کے نواحی گاﺅں447ای بی میں عرصہ5سال سے مسجد میں امامت کروانےو الے حافظ محمد ممتاز کو آج گاﺅں کے بااثر زمینداروں کے آوارہ بیٹیوں فہد چیمہ اور علی اصغر چیمہ نے مسجد میں داخل ہو کر لوہے کی سلاخوں اور ڈنڈوں سے نیم برہنہ کرکے تشدد کا نشانہ بنایا نازک اعضاءپر بھی تشدد کرتے رہے۔ دوران تشدد نیم بیہوش ہونے ملزمان امام مسجد کو چھوڑ کر فرار ہو گئے اور وہ بڑی مشکل سے رکشہ پر سوار ہو کر ہسپتال پہنچا۔

امام مسجد نے بتایا کہ ملزمان اکثر اوقات مسجد آکر غیر اخلاقی حرکات کرتے تھے منع کرنے پر انہوں نے مجھے تشدد کا نشانہ بنایا حافظ ممتاز کے مطابق ملزمان نشہ بھی کرتے ہیں اور کچھ روز قبل ہی ایک مقدمہ میں رہا ہو کر آئے ہیں تھانہ سٹی پولیس نے اطلاع ملنے کے باوجود تاحال ملزمان کو گرفتار نہیں کیا۔

مصنف کے بارے میں