ممبئی: بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق بالی ووڈ اداکارہ کنگنا رناوت سے ایک تقریب کے دوران گلوکار سونونگم کے اذان کے بارے میں دیئے گئے بیان کے حوالے سے پوچھا گیا تو ان کا کہنا تھا کہ میں کسی اور کے حوالے سے تو کچھ نہیں کہہ سکتی ہوں لیکن مجھے ذاتی طور پر اذان بہت پسند ہے۔ اداکارہ نے کہا کہ جب وہ اپنی فلم ’تنو ویڈز منو ریٹرنس‘ کی لکھنو میں شوٹنگ کر رہی تھیں تو اس وقت جب بھی انہیں اذان کی آواز آتی تھی تو وہ اس میں محو ہو جاتی تھیں کیونکہ انہیں اذان بہت زیادہ پسند ہے۔

اداکارہ نے کہا کہ مذہب یا کسی بھی چیز کے حوالے سے وہ بس اپنی ہی رائے دے سکتی ہیں کسی اور کے بارے میں کچھ نہیں کہہ سکتی ہیں۔ کنگنا نے کہا کہ مجھے مسجد، مندر اور چرچ جانا بہت پسند ہے جب کہ میں کرسمس بھی مناتی ہوں۔ سونو نگم نے جو بھی کہا کہ وہ ان کی اپنی رائے تھی جس کو لے کر زیادہ بات نہیں کرنا چاہیئے۔

واضح رہے کہ سونونگم نے گزشتہ دنوں اپنی ٹوئٹ میں کہا تھا اگرچہ وہ مسلمان نہیں لیکن پھر بھی انہیں اذان کی آواز سے صبح جاگنا پڑتا ہے اور پتہ نہیں بھارت میں یہ جبری مذہب پرستی کب ختم ہو گی۔

 

 

 

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں