کوئٹہ میں ہونے والے دہشتگرد حملے کی مذمت کرتے ہیں، چین

 کوئٹہ میں ہونے والے دہشتگرد حملے کی مذمت کرتے ہیں، چین
کیپشن:   کوئٹہ میں ہونے والے دہشتگرد حملے کی مذمت کرتے ہیں، چین سورس:   فوٹو/سوشل میڈیا

بیجنگ: بلوچستان کے صوبائی دارالحکومت کوئٹہ میں ہونے والے دھماکے کی مذمت کرتے ہوئے چین نے کہا ہے ہمیں پاکستانی اداروں سے امید ہے وہ جلد ذمہ داروں تک پہنچ جائیں گے۔ 

ترجمان چینی وزارت خارجہ وانگ وین بِن نے کہا کہ کوئٹہ میں دہشتگرد حملے کی شدید مذمت کرتے ہیں اور دھماکے میں مرنے والوں کے لواحقین سے اظہار تعزیت کرتے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ دھماکے کے وقت چینی سفیر اور وفد کے اراکین ہوٹل میں موجود نہیں تھے اور ہمیں پاکستانی اداروں سے امید ہے وہ جلد ذمہ داروں تک پہنچ جائیں گے جبکہ چین انسداد دہشت گردی کے شعبے میں پاکستان کے ساتھ تعاون جاری رکھے گا۔

یاد رہے کہ گزشتہ روز بلوچستان کے صوبائی دارالحکومت کوئٹہ میں دھماکے میں 5 شہری جاں بحق ہو گئے اور 12 زخمی ہو گئے تھے ۔ اسسٹنٹ کمشنر ریونیو کوئٹہ اعجاز احمد اور اسسٹنٹ کمشنر جعفر آباد بلال شبیر زخمیوں میں شامل ہیں۔

وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید احمد نے تصدیق کی تھی کہ چینی سفیر نونگ رونگ اسی ہوٹل میں قیام پذیر تھے تاہم دھماکے کے وقت وہ وہاں موجود نہیں تھے اور وہ بالکل خیریت سے ہیں۔

شیخ رشید کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا تھا کہ کوئٹہ دھماکا دشمن کی سازش ہے اور ملک میں دہشتگردی کی لہر پلاننگ کے تحت آ رہی ہے اور یہ انٹرنیشنل ایجنڈا ہے۔

وزیر داخلہ نے خطرات سے آگاہ کرتے ہوئے کہا کہ بڑے شہروں میں دہشتگردی کی اطلاعات ہیں۔ راولپنڈی، اسلام آباد، پشاور اور کراچی میں دہشتگردی ہو سکتی ہے جبکہ اداروں کی جانب سے الرٹ جاری کر دیا گیا ہے۔

انہوں نے عزم کا اظہار کیا کہ دشمن کو شکست دے کر ان کو انجام تک پہنچائیں گے اور پاکستان کو نقصان پہنچانے کی سازشیں ناکام ہوں گی جبکہ کوئٹہ دھماکے کی تحقیقات کرائی جائیں گی۔