لہسن کا استعمال: کیل مہاسوں سےمکمل نجات

لہسن کا استعمال: کیل مہاسوں سےمکمل نجات

اسلام آباد: انسان اپنے چہرے پر پڑ جانے والے کیل مہاسوں سے پریشان رہتے ہیں اور ان کے علاج کے لیے مہنگی ترین کریموں اور ادویات کا استعمال کرتے ہیں لیکن ایک برطانوی بیوٹیشن نے ایسا آسان اور سستا نسخہ لوگوں کو بتا دیا ہے جس میں صرف لہسن کو چہرے پر رگڑنے سے دانے غائب ہوجاتے ہیں۔


میڈیا رپورٹ کے مطابق بیوٹیشن فرح دھوکی نے چہرے سے سفید دھبوں یا کیل مہاسوں کو صاف کرنے کا ویڈیو جب یوٹیوب پر ڈالا تو لاکھوں لوگوں نے اسے دیکھا۔ فرح نے اس نسخے کے دوران اپنے ناخنوں کا استعمال نہیں کیا بلکہ اس کے لیے انہوں نے لہسن کے ایک جوے کو لیا اور اپنے داغ پر مسلنا شروع کردیا۔

فرح کا کہنا تھا کہ لہسن کے جوے کو استعمال سے قبل اس پر چند کٹس لگائیں تاکہ اس میں سے جوس آسانی سے نکل سکے پھر اسے اپنے دانوں پر مسل لیں کچھ ہی سکینڈ بعد دانے غائب ہوجائیں گے۔ ان کا کہنا ہے کہ اگر دانے زیادہ بڑے ہوں تو اس کے لیے لہسن کو رات میں چہرے پر رگڑ کر صبح دھو لیں دانے اس سے دانے غائب ہوجائیں گے۔

ماہرین طب کا کہنا ہے کہ لہسن میں اینٹی بیکٹیریل، اینٹی فنگل، اینٹی وائرل اور جراثیم سے صاف ( اینٹی سیپٹک) خصوصیات پائی جاتی ہیں جس کی مدد سے چہرے پر پڑے کیل مہاسے دور کیے جا سکتے ہیں۔ اس کے علاوہ لہسن اپنی تیزابیت کو ختم کرنے والی خوبی کی وجہ سے درد اور تیزابیت کو دورکرتا ہے جب کہ اسے جلد پر پڑنے والے داغوں کو صاف کرنے کے لیے بھی استعمال کیا جاتا ہے۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں