ترک ”معالج محلہ“ کینسر کے مریضوں کیلئے شفا خانہ بن گیا

استنبول : ترکی میں ایک ایسا محلہ جہاں دنیا بھر سے کینسر کے مریض شفا یابی کیلئے آتے ہیں دنیا میں خاصہ مشہور ہو رہا ہے۔ ترک خبر رساں ایجنسی کے مطابق آئی واجیک نامی محلہ جہاں دور عثمانی میں شہزادے اقامت اختیار کیا کرتے تھے لیکن اب یہاں ہالینڈ، برطانیہ، فرانس، جرمنی اور امریکا سمیت دیگر ممالک سے مریض شفایابی کے لئے آتے ہیں۔

ترک ”معالج محلہ“ کینسر کے مریضوں کیلئے شفا خانہ بن گیا

استنبول : ترکی میں ایک ایسا محلہ جہاں دنیا بھر سے کینسر کے مریض شفا یابی کیلئے آتے ہیں دنیا میں خاصہ مشہور ہو رہا ہے۔ ترک خبر رساں ایجنسی کے مطابق آئی واجیک نامی محلہ جہاں دور عثمانی میں شہزادے اقامت اختیار کیا کرتے تھے لیکن اب یہاں ہالینڈ، برطانیہ، فرانس، جرمنی اور امریکا سمیت دیگر ممالک سے مریض شفایابی کے لئے آتے ہیں۔


ترک ماہر رقص نورسیل قارا عثمان اولو شیمیشک پھیپھڑوں کے کینسرمیں مبتلا تھیں جنہوں نے یہاں سے شفا پائی۔کوہ اسپل کا قومی پارک کینسرسے شفا یابی میں انتہائی اکسیر ہے حتیٰ کہ بلڈ کینسر میں مبتلا ایک شخص استنبول سے یہاں آیا جس نے واپسی پر جب اپنا خون کا تجزیہ کروایا تو یہ دیکھ کر حیران ہو گیا کہ اس کے خون میں فاسد مادوں کی مقدار کم اور دیگر ضروری مادوں کی مقدار زیادہ ہو گئی ہے۔

اس محلے کو معالج محلہ بھی کہا جاتا ہے جہاں کی آبادی ماضی میں صرف 5 یا 6 افراد پر مشتمل تھی جو کہ اب بڑھ کر 250 افراد کے قریب جا پہنچی ہے۔