اسرائیلی پولیس نے پیدل چلنے والے فلسطینی صحافی کا چالان کر ڈالا

رام اللہ :مقبوضہ بیت المقدس میں ایک فلسطینی صحافی اس وقت حیران و پریشان رہ گیا جب ایک اسرائیلی پولیس اہل کار نے اس کے خلاف ٹریفک کی خلاف ورزی کا 60 ڈالر کا چالان کر دیا۔ابو شقرہ نے عرب ٹی وی کو بتایاکہ میں فلسطینی تنظیم پاپولر رزسٹینس فرنٹ کی ایک تقریب کی کوریج کے سلسلے میں پبلک ٹرانسپورٹ کے ذریعے بیت المقدس کے مشرق میں واقع علاقے کی جانب روانہ ہوا۔
بعد ازاں پیدل چلتے ہوئے میں مطلوبہ مقام کے قریب پہنچا تو ایک اسرائیلی پولیس اہل کار نے مجھے سے میرا شناختی کارڈ لے لیا اور مطالبہ کیا کہ میں اپنی گاڑی کو سڑک پر ہی چھوڑ دوں۔ میں نے اس کو جواب دیا کہ میرے پاس گاڑی نہیں ہے۔ اس پر اس نے دھمکی دی کہ وہ زبردستی گاڑی کو سڑک پر ہی روک دے گا۔ اس پر میں نے جواب دیا کہ تم میرے شناختی کارڈ کے ذریعے جان سکتے ہو کہ میرے پاس تو ڈرائیونگ لائسنس بھی نہیں ہے۔
اس پر ا±س اہل کار نے مجھے بڑے غور سے دیکھا اور کہا : اس سے کوئی مطلب نہیں۔ میں تمہارے خلاف چالان جاری کروں گا کیوں کہ تم اس جگہ گھوم رہے ہو۔اس سے قبل اسرائیلی پولیس نے متعدد صحافیوں کی گاڑیوں کے خلاف ٹریفک کے چالان جاری کیے۔ چالان کرتے ہوئے ان صحافیوں کو خاص طور پر نشانہ بنایا گیا۔