عمران خان کو بتائیں ہم پہلے ہی بیرکوں میں رہنے کے عادی ہیں، زرداری

عمران خان کو بتائیں ہم پہلے ہی بیرکوں میں رہنے کے عادی ہیں، زرداری
جیل میں سہولتیں کون سی ہیں جو لے لیں گے، زرداری۔۔۔۔۔۔فوٹو/ پیپلز پارٹی فیس بُک پیج

اسلام آباد: جعلی اکاؤنٹس کیس کی سماعت کے سلسلے میں احتساب عدالت اسلام آباد میں پیشی کے موقع پر آصف زرداری نے صحافیوں سے غیر رسمی گفتگو کی۔ صحافی نے سوال کیا کہ عمران خان کہتے ہیں امریکا سے واپسی پر آپ سے اے سی اور ٹی وی وغیرہ کی سہولتیں واپس لے لیں گے۔ اس پر آصف زرداری نے جواب دیا کہ سہولتیں کون سی ہیں جو لے لیں گے۔ اسے بتاؤ ہم پہلے ہی بیرکوں میں رہنے کے عادی ہیں۔


صحافی نے سوال کیا کہ پہلے چیئرمین سینیٹ بنایا اب اتارنے جا رہے ہیں کیا کہیں گے۔ سابق صدر کا کہنا تھا کہ نہ میں نے بنایا اور نہ ہی میں اتارنے جا رہا ہوں۔

صحافی کے سوال پر کہ چیئرمین سینیٹ کی جگہ ڈپٹی چیئرمین کو ہٹانے کی بات کی جا رہی ہے۔ سابق صدر نے جواب دیا کہ ان کی اپنی مرضی۔

دوسری جانب عدالت میں سماعت کے دوران آصف زرداری روسٹرم پر آئے اور وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے احتساب شہزاد اکبر کے بیان کا اخباری تراشہ پیش کیا۔

آصف زرداری نے کہا کہ شہزاد اکبر کہتے ہیں کہ میری 32 جائیدادیں ہیں عدالت ان کو طلب کر کے اس سے متعلق پوچھے۔