بھارتی فوجیوں کو کیوں ہلاک اور لاشیں مسخ کی گئیں؟ فوجیوں کے اہلخانہ کا آرمی چیف کو خط

بھارتی فوجیوں کو کیوں ہلاک اور لاشیں مسخ کی گئیں؟ فوجیوں کے اہلخانہ کا آرمی چیف کو خط

بیجنگ:چینیوں کے ہاتھوں بھارتی فوجیوں کی درگت بننے پر بھارتی حاضر سروس اور ریٹائرڈ فوجی چراغ پا ہوگئے۔چین کے ہاتھوں رسوائی پر بھارتی حاضر سروس اور ریٹائرڈ فوجیوں نے اپنے آرمی چیف کو خط لکھ دیا جب کہ لوگوں نے حکومت پر سوالات کی بوچھاڑ کردی ہے۔


بھارتی فوجیوں کے خط میں کہا گیا ہے کہ واقعے کے زمینی حقائق چھپانے کے لیے کہانی پر کہانی گھڑی جا رہی ہے۔بھارتی ٹی وی کے مطابق بھارتی حاضر سروس اور ریٹائرڈ فوجیوں کے اہل خانہ نے بھارتی آرمی چیف کو کھلے خط میں پوچھا ہے کہ بتایاجائے وادی گلوان میں کیا واقعہ پیش آیا، بھارتی آرمی چیف سے سوال کیا گیا کہ ایک سی او سمیت کئی انڈین فوجی کیسے مارے گئے؟ بھارتی فوجیوں کو کیوں ہلاک کیا گیا اور کیوں لاشیں مسخ کی گئیں؟

آرمی چیف سے حاضر سروس اور ریٹائرڈ فوجیوں کے اہل خانہ نے یہ بھی پوچھا ہے کہ کیا کبھی اصل حقیقت معلوم ہوگی؟ بھارتی آرمی چیف سے کہا گیا ہے کہ انڈین فوجی توپ کا بارود نہیں ہیں، سفارتی فوائد کے لیے بھارتی فوجیوں کو ذبح نہیں کیا جاسکتا، داخلی اور بیرونی طورپرمشکل وقت کا سامنا کرنا پڑ رہاہے۔

خط میں کہا گیا ہے کہ بھارتی فوجیوں کو غیر پیشہ ورانہ اندازمیں کھو دیا گیا اور زمینی حقائق چھپانے کیلیے کہانی پر کہانی گھڑی جا رہی ہے، بھارتی فوجیوں کی ہلاکت کی بڑی ذمہ داری آرمی چیف پر بھی آتی ہے۔