نواز شریف کی تمام جائیداد نیلام کرکے رقم قومی خزانے میں جمع کرانے کا حکم

نواز شریف کی تمام جائیداد نیلام کرکے رقم قومی خزانے میں جمع کرانے کا حکم
کیپشن:   نواز شریف کی تمام جائیداد نیلام کرکے رقم قومی خزانے میں جمع کرانے کا حکم سورس:   file

اسلام آباد: احتساب عدالت اسلام آباد نےسابق وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف کی تمام جائیداد نیلام کرنے کے لئے  نیب راولپنڈی  کی درخواست منظور کرلی  ہے۔

نیو نیوز کے مطابق عدالت نے حکم دیا ہے کہ نوازشریف کی جہاں جہاں جائیداد ہے متعلقہ صوبائی حکومت نیلام کرسکتی ہے۔ ڈپٹی کمشنر لاہور اور شیخو پورہ سے ساٹھ روز  میں رپورٹ  طلب کرلی ۔

احتساب عدالت نے حکم دیا کہ جائیدادیں نیلام کر کے رقم قومی خزانے میں جمع کرائی جائے  اس کے علاوہ سابق وزیر اعظم کے اکاؤنٹس میں جتنی رقم ہے ساری سرکاری اکاؤنٹس میں منتقل کی جائے ۔

ایس ای سی پی کے مطابق نواز شریف کے 4 کمپنیوں میں شیئرز ہیں، محمد بخش ٹیکسٹائل ملز میں نواز شریف کے 4 لاکھ 67 ہزار 950 ، حدیبیہ پیپر ملز میں 3 لاکھ 43 ہزار 425، حدیبیہ انجینئرنگ کمپنی میں 22 ہزار 213 اور اتفاق ٹیکسٹائل ملز میں 48 ہزار 606 شیئرز ہیں۔

نواز شریف کے مختلف نجی بینکس میں 3 غیر ملکی کرنسی سمیت 8 اکاؤنٹس ہیں، ان کے 5 بینک اکاؤنٹس میں 6 لاکھ 12 ہزار روپے موجود ہیں، غیر ملکی کرنسی والے اکاؤنٹس میں 566 یورو، 698 امریکی ڈالرز اور 498 برطانوی پاؤنڈز موجود ہیں۔

رپورٹ میں مزید کہا گیا ہے کہ ایل ڈی اے ، لاہور اور شیخو پورہ کے ایڈیشنل ڈپٹی کمشنرز ، مری کے اسسٹنٹ کمشنر اورگلیات ڈویلپمنٹ اتھارٹی نے بھی نواز شریف اور ان کے زیر کفالت افراد کے نام لاہور، شیخو پورہ ، مری اور ایبٹ آباد میں جائیدادوں کے حوالے سے رپورٹ دی ہیں، جس کے مطابق نواز شریف اور ان کے زیر کفالت افراد کے نام 1752 کنال سے زائد زرعی اراضی ہے۔

لاہور کے موضع مانک میں 936 کنال ،موضع بڈوکسانی میں 299 کنال، شیخو پورہ کے موضع منڈیالی میں 14 کنال اور موضع فیروزوطن میں 88 کنال اراضی ہے۔ اس کے علاوہ مری میں بنگلہ، چھانگلہ گلی ایبٹ آباد میں 15 کنال کا مکان اور اپر مال لاہور پر جائیداد بھی ہے۔

واضح رہے کہ سابق وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف کو احتساب عدالت نے توشہ خانہ ریفرنس میں اشتہاری قرار دے رکھا ہے۔