پاکستانی اداکارہ نادیہ جمیل برطانیہ میں نسلی تعصب کا شکار

پاکستانی اداکارہ نادیہ جمیل برطانیہ میں نسلی تعصب کا شکار

لندن :معروف پاکستانی اداکارہ کولندن میں ہوٹل سے نکال دیا گیا تفصیلات کے مطابق  پاکستانی اداکارہ اپنے والد کے ہمراہ ایک ہوٹل میں گئیں جہاں عملے نے ان سے انتہائی ناروا سلوک کیا اور کھانے فراہم کرنے سے انکار کر دیا۔ پاکستانی اداکارہ نادیہ جمیل نے برطانیہ میں اپنے ساتھ پیش آئے واقعے کی تفصیلات بتاتے ہوئے کہا ہے کہ انھیں پہلی مرتبہ انگلینڈ میں نسلی تعصب کا سامنا کرنا پڑا۔

جب لندن میں قائم ایک اٹالین ریسٹورنٹ نے صرف میرے والد کی داڑھی کی وجہ سے انھیں اور مجھے نہ صرف کھانا دینے سے انکار کیا بلکہ ہوٹل سے بھی چلے جانے کا کہہ دیا۔دوسری جانب اٹالین ریسٹورنٹ نے ان الزامات کی تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہم سب کو خوش آمدید کہتے ہیں۔ ٹویٹر پر جاری تردیدی بیان میں ہوٹل کیا انتظامیہ نے لکھا کہ ٹویٹر پر جاری کسی پوسٹ پر یقین نہ کریں۔

ہم نے کسی کو بھی سروس فراہم کرنے سے انکار نہیں کیا بلکہ ہم تو ہر کسی کو خوش آمدید کہتے ہیں۔اس ٹویٹ کے جواب میں نادیہ جمیل نے لکھا کہ ریسٹورنٹ کے عملے نے نہ صرف ہمیں کھانا دینے سے انکار کیا بلکہ ہمارے ہاتھوں سے مینیو چھین کر ہمیں غصے سے اور چلاتے ہوئے وہاں سے چلے جانے کو کہا گیا تھا۔